علی امین گنڈاپور اپنے لیڈر کے نقش قدم پر چل رہے ہیں، مولا جٹ والے رویے سے ملک کا نقصان ہو رہا ہے ،گورنر پنجاب سلیم حیدر

تحریر: None

| شائع |

گورنر خیبر پختونخوا فیصل کریم کنڈی اور وزیراعلیٰ علی امین گنڈاپور  کے مابین میدان لگا رہتا ہے۔ یہ ایک دوسرے کے خلاف بیان بازی کو فرض عین سمجھتے ہیں۔ خیبر پختونخوا میں گورنر ہاؤس اور وزیراعلیٰ ہاؤس کے مابین آج کل وہی کچھ ہو رہا ہے جو ڈیرہ اسماعیل خان میں فیصل کریم کنڈی اور علی امین گنڈاپور کے مابین انتخابی مہم کے دوران ہوتا رہا ہے۔ دونوں انتخابی حریف ہیں اور اتفاق سے مولانا فضل الرحمن بھی اسی حلقے سے الیکشن لڑتے ہیں۔

سلیم حیدر گورنر پنجاب ہیں اور ان کو مسلم ل

یگ نون اور پیپلز پارٹی کے مابین ہونے والے معاہدے کے تحت گورنر بنایا گیا ہے۔حسن ابدال میں تقریب کے دوران ان کی طرف سے علی امین گنڈا پور کے رویے کو مولا جٹ کے رویے سے تعبیر کیا گیا۔مولا جٹ پنجابی فلم کا کردار تھا جو سلطان راہی نےادا کیا ۔سلطان راہی کی بڑھکیں بہت سی فلموں کی کامیابی کی وجہ بنیں۔علی امین گنڈا پور کا رویہ ہی مولا جٹ جیسا نہیں ہے بلکہ وہ بڑھکیں بھی مولا جٹ والی بھی کبھی کبھی مار دیتے ہیں ۔

گزشتہ دنوں انہوں نے کہا تھا کہ میرا ڈسا ہوا تو پانی بھی نہیں مانگتا۔کل ہی وہ مولا جٹ کی طرح ایک گرڈ سٹیشن میں چلے گئے۔اس بجلی گھر سے بجلی کی ترسیل رکی ہوئی تھی یہ گئے اور بجلی بحال کرا کر واپس آئے۔تڑیاں شڑیاں لگانا تو ان کا معمول ہے۔شیر افضل مروت بھی بڑھک باز اور مولا جٹ والی  شہرت رکھتے ہیں۔بڑ ھکوں بڑھکوں میں ایک بڑھک اپنی پارٹی پر بھی مار دی جو بم کو لات مارنے کے مترادف ثابت ہوئی تو آج کل وہ کھڈے لائن لگے ہوئے ہیں۔