لاہور میں بکرا واش سروس شروع

تحریر: None

| شائع |

عید قربان سے قبل شہروں میں پارٹ ٹائم کاروبار شروع ہو جاتے ہیں۔ جگہ جگہ چارے کے سٹال لگے نظر آئیں گے سبز اور خشک ہر قسم کا چارہ گلی محلوں چوکوں چوراہوں میں بکنے لگتا ہے۔ گائیوں، بیلوں، بکری، بکروں کو سجانے سنوارنے کا سامان ٹل ٹلیاں ہار سنگھار کی فروخت شروع ہو جاتی ہے۔ اب کار سروس والوں نے بکرا واش کی سروس شروع کر دی ہے۔ بکری بکرے دنبے بھیڑ بھیڈو کو گرمی سے بچانے کے لیے نہلوانا ہے تو اس کا ریٹ کم ہے۔

سرف سے واش کرنے کے کچھ زیادہ پیسے ہیں۔ شیمپو کی کوالٹی پر منحصر ہ

ے ، بہترین کوالٹی امپورٹڈ کا ریٹ ہائی ہے۔ کنڈیشنر کی صورت میں نرخ بالا نشیں ہو جاتے ہیں۔ شہروں، قصبات اور دیہات میں بکرے یعنی قربانی کے جانور قسطوں پر بھی ملتے ہیں۔ جدید دور ہے کچھ آئی ٹی ایکسپرٹ جانور ڈاؤن لوڈ کرنے کی تدبیریں بھی سوچ رہے ہیں۔ منڈیوں میں رضا کار صفائی کرنے والے اور والیاں بھی نظر آتی ہیں۔ یہ بھی بزنس پرسن ہیں۔ گوبر کی ”پاتھیاں“ اوپلے بناتے ہیں جو دیہات میں آجکل 5روپے کی ایک بکتی ہے۔ گاؤں میں اوپلے ایندھن کیلئے استعمال ہوتے ہیں جبکہ شہروں میں حقے کے شوقین حقے میں آگ کیلئے بروئے کار لاتے ہیں۔