آخر کار پورے ملک بڑے آپریشن کا فیصلہ کرلیا ہے۔

تحریر: فضل حسین اعوان

| شائع نومبر 06, 2016 | 20:03 شام

 

اسلام آباد (مانیٹرنگ) بالخرقانون نافذ کرنے والے اداروں نے سیکیورٹی صورت حال کے پیش نظر ملک بھر میں بڑے پیمانے پر فرقہ وارانہ دہشت گردی کے خلاف بڑے آپریشن کا فیصلہ کیا ہے۔

 

565e8b916be43

 

سماء کے مطا

بق باوثوق ذرائع کا کہنا ہے کہ سیکیورٹی اور قانون نافذ کرنے والے اداروں نے ملک بھر میں فرقہ وارانہ دہشت گردی میں ملوث تنظیموں کے خلاف بڑے پیمانے پر آپریشن کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

 

pakistan-army-ispr-1

پہلی سطح پر فرقہ وارانہ دہشت گردی میں ملوث کالعدم تنظیموں کے خلاف کریک ڈاؤن لانچ کیا جائے گا، ذرائع کے مطابق مختلف مذہبی گروپ فرقہ وارانہ قتل وغارت گری میں ملوث ہیں۔

 

l_82423_051428_print

ذرائع کا یہ بھی کہنا ہے کہ کالعدم لشکر جھنگوی، لشکر جھنگوی العالمی، سپاہ صحابہ، القاعدہ برصغیر حالیہ دہشت گردی میں ملوث پائی گئی ہے۔ فرقہ وارانہ دہشت گردی کے خاتمے کیلئے اس میں ملوث مجرموں کی ضمانتیں مسترد کی جائیں گی۔

 

335764_15688298

 

دوسری جانب فرقہ وارانہ دہشت گردی میں ملوث مجرموں کی زرضمانت جمع کرانے والوں کو سہولت کار سمجھتے ہوئے حراست میں لیا جائیگا۔ فورتھ شیڈول میں لوگوں کے اسلحہ لائسنس منسوخ کرنے کا بھی فیصلہ کیا گیا ہے، ایسے افراد کے پاسپورٹ منسوخ کرنے اور ان کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کا فیصلہ بھی کیا گیا ہے۔

 

335244_38324126

واضح رہے کہ آپریشن کا فیصلہ نیشنل ایکشن پلان اور کومبنگ آپریشن کے تناظر میں کیا گیا ہے، آپریشن حالیہ دہشت گردی کی لہر کو مد نظر رکھ کر کیا جا رہا ہے۔ انٹیلی جنس بنیادیوں پر دہشت گردوں کی اطلاعات بھی آپریشن کا حصہ ہونگی