نوجوان لڑکی نے مغربی معاشرے کا انتہائی شرمناک پہلو بے نقاب کردیا

2018 ,نومبر 25



کنبرا(مانیٹرنگ رپورٹ) آسٹریلیا میں ایک لڑکے نے شادی سے چند ہفتے قبل اپنی منگیتر کو اپنے باپ سے ملوانے کے لیے گھر بلایا۔ جب وہ وہاں پہنچی تو سامنے ایسا شخص کھڑا تھا کہ دیکھ کر اس کے اوسان خطا ہو گئے۔ میل آن لائن کے مطابق یہ لڑکی اس عمررسیدہ شخص کے ساتھ جنسی تعلق استوار کر چکی تھی اور اسے معلوم ہی نہیں تھا کہ وہ اس کے ہونے والے شوہر ٹونی کا باپ ہے۔ کڈزپاٹ سے گفتگو کرتے ہوئے اس لڑکی نے بتایا کہ بہت سال پہلے میں صرف عمررسیدہ مردوں کے ساتھ ڈیٹنگ کرتی تھی۔ ایک روز میں ٹونی کے باپ مارٹن سے ملی اور ہم نے ایک رات اکٹھے گزاری۔ ہم نے شراب پی اور جنسی تعلق بھی قائم کیا۔ اس کے بعد ہم کبھی نہیں ملے۔

لڑکی کا کہنا تھا کہ ”جب میں ان کے گھر پہنچی تو مارٹن کو سامنے کھڑا دیکھ کر دنگ رہ گئی۔ تاہم میں نے اوسان بحال رکھے اور چہرے پر ایک مسکراہٹ لاتے ہوئے ہاتھ آگے بڑھا کر ہیلومارٹن کہتے ہوئے اس سے مصافحہ کیا۔ اس نے بھی جواب میں، مجھے پہچان لینے کے باوجود ہیلو کہہ دیا۔ اس کے ساتھ اس کی کم عمر گرل فرینڈ بھی موجود تھی۔ اب میری اور ٹونی کی شادی کو 4سال ہو گئے ہیں اور ہم دونوں نے کسی کو بھی اپنے اس راز کے بارے میں نہیں بتایا۔ مارٹن اپنے بحری جہاز پر ملک ملک گھومتا رہتا ہے اور سال میں ایک بار ہی گھر آتا ہے۔ اس ملاقات میں ہم ایک یا دو بار کھانے پر اکٹھے ہوتے ہیں اور مجھے ازراہ مجبوری چہرے پر مسکراہٹ سجائے رکھنی ہوتی ہے۔ تاہم میں سوچتی ہوں کہ اپنے راز کو راز رکھنے کی یہ کوئی زیادہ قیمت نہیں ہے۔“

متعلقہ خبریں