صف اول کی اداکارہ کو اغواء کرنے کے بعد نیلامی کے لیے پیش کر دیا گیا

2017 ,اگست 8



لندن(مانیٹرنگ رپورٹ) گزشتہ دنوں ایک برطانوی فیشن ماڈؒل کے اغوا کی خبر نے پوری دنیا کو دہلا کر رکھ دیا ہے۔ کلوئی ایلنگ نامی اس ماڈل کا اغوا کوئی عام کارروائی نہیں تھی۔ اغوا کاروں نے اسے اغوا کر کے ناصرف 6 دن حبس بے جا میں رکھا بلکہ آن لائن فروخت کیلئے اس کا اشتہار بھی لگا دیا گیا تھا۔
مغوی ماڈل نے بتایا کہ اغواء کاروں نے اسے فروخت کرنے کا مکمل منصوبہ تیار کر لیا تھا، مگر جب انہیں پتہ چلا کہ اس کا ایک بیٹا ہے جس کی عمر صرف دو سال ہے، تو انہوں نے اغواء کو غلطی قرار دے کر اسے چھوڑ دیا۔
برطانوی ماڈل کا کہنا تھا کہ وہ اٹلی میں ایک فیشن شو میں شرکت کے لیے گئی تھی۔ وہ میلان پہنچی تو نامعلوم افراد نے اسے نشہ آور چیز سے بے ہوش کر دیا اور مسلسل چھ دن تک قید رکھا۔ اطالوی پولیس کا کہنا ہے کہ فیشن ماڈل کو بلیک ڈیتھ گروپ نامی ایک مافیا نے اغوا کیا جو اسے جنسی مقاصد کے لیے فروخت کرنا چاہتا تھا۔ پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے واقعے کے مرکزی ملزم کو گرفتار کر لیا ہے۔
 جس کا نام لوکاش ھیرپا ہے، ملزم نے اپنے ابتدائی بیان میں تسلیم کیا ہے کہ اس نے اپنے ساتھیوں کے ساتھ مل کر برطانوی لڑکی کو 3 لاکھ 50 ہزار ڈالرز میں نیلام کرنے کا پلان بنایا تھا۔ اس کی نیلامی کا اشتہار ڈارک ویب پر پوسٹ کیا گیا۔
 

متعلقہ خبریں