آپکے بچوں کی دماغی صلاحیتوں کیوں کمزور ہے

2016 ,دسمبر 5



لندن (شفق ڈیسک) بچے ہوں یا بڑے جنک فوڈ کسے پسند نہیں مگر لوگوں کے درمیان اس کی پسندیدگی میں اضافہ اور اس کا تیزی سے بڑھتا ہوا رجحان کس قدر خطرناک ہے اس سے یقیناًآپ لا علم ہوں گے۔ جنک فوڈ کو اگر موجود دور کا بڑھتا ہوا مسئلہ کہا جائے تو غلط نہیں ہو گا۔ آج کل کے بچے گھر کی چیزوں سے زیادہ جنک فوڈ کھانے کو ترجیح دیتے ہیں اس معاملے میں والدین بھی منفی کردار ادا کرتے ہیں بچوں کی ضد پر انہیں بازار سے اشیاء خرید دیتے ہیں۔ ان کھانوں میں چند ایسی اجزاء شامل کی جاتی ہیں جو انہیں بے حد لذیز بنا دیتی ہیں، اور بچے ان کے عادی ہو جاتے ہیں، مگر کیا آپ کو معلوم ہے کہ ان کے ذریعے بچوں کی دماغی صلاحیتیں کس حد تک متاثر ہوتی ہیں۔ یہ کھانے بچوں کے ناپختہ دماغ کو اثر انداز کررہے ہیں۔ ماہرین کے مطابق بچپن میں کھایا جانے والا جنک فوڈ بچوں کی بڑھتی عمر کیلئے نقصان دہ ثابت ہوتا ہے۔ اس کے ذریعے بچوں کے رویوں میں تبدیلی سمیت دماغ بھی کمزور ہونے لگتا ہے۔ ایک تحقیق سے یہ بات ثابت ہوئی ہے کہ جو بچے جنک فوڈ کھاتے ہیں تو اسکا اثر چند ہفتوں میں ہی نظر آنا شروع ہوجاتا ہے۔ فاسٹ فوڈ میں شامل فیٹس بچوں میں غصہ اور چڑچڑاپن پیدا کردیتا ہے، مسلسل جنک فوڈ کھانے سے دماغ کے کچھ حصے کام کرنا چھوڑ دیتے ہیں جسکی وجہ سے بچوں کو پڑھنے میں مشکل کا سامنا کرنا پڑتا ہے اور بچوں ضدی ہوجاتے ہیں۔ فاسٹ فوڈ بڑی عمر کے لوگوں کو اتنا نقصان نہیں پہنچاتاجتنا چھوٹے بچوں کو نقصان پہنچاتا ہے۔ لیکن اس کا ہرگز یہ مطلب نہیں کہ بڑی عمر کیلوگ باقاعدگی سے جنک فوڈ کھانا شروع کردیں۔

متعلقہ خبریں