لڑکی پر شیطانوں کا حملہ

2016 ,دسمبر 13



 

ماسکو (شفق ڈیسک) روس کے شہر سکائٹی وکار میں چلتی گاڑی میں سے ایک خاتون کو برہنہ حالت میں باہر گرتا دیکھ کر لوگ حیران رہ گئے۔ لیکن اس کے بعد جو کچھ ہوا۔ اسے دیکھنے والے اپنی آنکھوں پر یقین نہ کر پائے۔ عینی شاہدین نے مقامی میڈیا کو بتایا کہ وہ سڑک سے کچھ فاصلے پر موجود اپنے گھر کی بالکونی میں کھڑے تھے کہ اچانک سڑک پر دوڑتی ایک کار میں سے خاتون کو باہر گرتے دیکھا۔ یہ خاتون مکمل طور پر برہنہ تھی اور نیم بیہوش نظر آرہی تھی۔ یہ منظر دیکھ کر انہوں نے پولیس کو اطلاع دی لیکن اسی دوران دو راہگیر خاتون پر جھپٹے اور اسے کھینچتے ہوئے قریبی جھاڑیوں میں لے گئے۔ ان راہگیروں نے نیم بیہوش خاتون کو جنسی درندگی کا نشانہ بنانا شروع کردیا عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ خاتون کی چیخوں کی آواز کے باوجود کسی نے کوئی مداخلت نہ کی۔ پولیس کے پہنچنے سے قبل ہی درندہ صفت راہگیر خاتون کی عصمت دری کرکے فرار ہوچکے تھے۔ اس شرمناک واقعے کی تفصیلات سامنے آنے پر روسی عوام میں غصے اور اشتعال کی لہر دوڑ گئی۔ عوام کی جانب سے پرزور مطالبہ کیا جارہا ہے کہ خاتون کو ہوس کا نشانہ بنانیوالے راہگیروں کا جلد از جلد سراغ لگا کر انہیں سخت ترین سزا دی جائے۔ پولیس کا کہنا ہے کہ خاتون ہسپتال میں زیر علاج ہے، تحقیقات ابھی ابتدائی مراحل میں ہیں اور فی الحال یہ واضح نہیں کہ خاتون کو برہنہ حالت میں گاڑی سے باہر کس نے اور کیوں پھینکا؟

متعلقہ خبریں