ججوں کیخلاف ریفرنس، اراکین سینیٹ نے اکھٹے ہوکر ایسا کام کردکھایا کہ صدر مملکت بھی حیران پریشان رہ جائیں گے

2019 ,مئی 31



اسلام آباد (مانیٹرنگ رپورٹ) ججوں کے خلاف حکومتی ریفرنسز پر جج صاحبان کیساتھ اظہار یکجہتی کے لیے پیش کی گئی قرارداد  سینیٹ نے منظور کرلی جس میں حکومت سے ججوں کیخلاف ریفرنس واپس لینے کا مطالبہ کیا گیا۔ مسلم لیگ ن کے سینیٹر راجہ ظفرالحق نے سینیٹ میں قرارداد پیش کی جس میں موقف اپنایا گیا کہ یہ ایوان سپرئم کورٹ کے بعض معزز ججز کے خلاف ریفرنس دائر کرنے پر اظہار تشویش کرتا ہے۔

ریفرنس خفیہ انداز میں دائر کیا گیا ، جس کا متعلہ ججز ز کو علم نہیں تھا، حکومتی ریفرنس کے دائر کرنے پر شدید تنقید ہو رہی ہے اور بار میں تقسیم نظر آئی ہے جبکہ ایڈیشنل اٹارنی جنرل مستعفی ہو گئے۔ قرارداد کے متن میں کہا گیا ہے کہ شبہ پیدا ہوتا ہے ، کہ ریفرنس معزز ججز کے حالیہ فیصلوں سے متعلق ہے، یہ ریفرنس عدلیہ پر براہ راست حملہ ہے، ایوان معزز ججز کے ساتھ اظہار یکجہتی کرتا ہے اور حکومت معزز ججز کے خلاف ریفرنس واپس لے۔ ن لیگ کی طرف سے پیش کی گئی یہ قرار داد ایوان نے منظور کرلی ۔ 

    متعلقہ خبریں