حکومت نے دہلی کے لال قلعے پر اسلام کا پرچم لہرانے کا باقاعدہ اعلان کردیا

2019 ,اگست 7



اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) وفاقی وزیر علی محمد خان نے کہاہے کہ جوجنگ نریندرا مودی نے شروع کی ہے اس سے کشمیر پاکستان کاحصہ بنے گا ، سرینگر میں سبز ہلالی پرچم لہرائے اور دہلی کے لال قلعے پر اسلام کا پرچم لہرائے گا ۔جیونیوز کے پروگرام ”کیپٹل ٹاک“میں گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر علی محمد خان نے کہا کہ جوجنگ نریندرا مودی نے شروع کی ہے اس سے کشمیر پاکستان کاحصہ بنے گا ، سرینگر میں سبز ہلالی پرچم لہرائے اور دہلی کے لال قلعے پر اسلام کا پرچم لہرائے گا ۔انہوں نے کہا کہ ہم اور کشمیر ی ایک ہی ہیں جو کچھ مقبوضہ کشمیر میں یاسین ملک کے ساتھ جوکچھ ہو رہا ہے ، وہ خالی زمین پر سورہے ہیں ، ان کوچادر نہیں دی جارہی ، علی گیلانی بھی نظر بند ہیں۔انہوں نے کہا کہ پاکستانی قوم اس وقت بہت جذباتی ہے ، اپوزیشن اور حکومت میں کوئی تقسیم نہیں ہے ۔علی محمد خان کا کہنا تھا کہ غزوہ ہند کے بارے میں حضور ﷺ کی حدیث موجود ہے ، نریندرا مودی مسلمانوں کا قاتل ہے، اس لئے باتوں کی بجائے عملی اقدامات زیادہ سامنے آنے چاہئے ۔ جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق کشمیر لبریشن فرنٹ کے رہنما یاسین ملک کی اہلیہ مشال ملک نے کہا ہے کہ اس وقت کشمیریوں پر ظلم وستم کے پہاڑ توڑے جارہے ہیں اور عورتوں کاریپ کیا جارہاہے ، کچھ کشمیری جو سرینگر سے دہلی پہنچے ہیں ، میں نے ان سے بات کی ہے ، وہ رو رہے تھے کہ یہ کیا ہورہاہے ؟حکومت پاکستان کواس کا بھی نوٹس لیناچاہئے ۔جیونیوز کے پروگرام ”کیپٹل ٹاک“میں گفتگو کرتے ہوئے مشال ملک نے کہا کہ اس وقت کشمیر ی قوم کے ساتھ دھوکا ہورہا ہے ، ہم لوگوں کو نہتا کرکے مارا جارہاہے ، اس کے لئے پاکستان کے ایک ایک فرد کو پوری دنیا میں آگاہی مہم چلانا پڑے گی ۔ان کا کہنا تھا کہ کچھ کشمیری جو سرینگر سے دہلی پہنچے ہیں ، میں نے ان سے بات کی ہے ، وہ رو رہے تھے کہ یہ کیا ہورہاہے ؟پاکستان کی جانب سے کشمیریوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کا بھرپور اظہار ہونا چاہئے ۔انہوں نے کہاکہ میرے شوہر یاسین ملک اس وقت ڈیتھ سیل میں ہیں ، ان کواوپن ٹوائلٹ میں سلایا جارہا ہے ۔مقبوضہ کشمیر میں اس وقت کشمیریوں پر ظلم وستم کے پہاڑ توڑے جارہے ہیں اور عورتوں کاریپ کیا جارہاہے ، حکومت پاکستان کواس کا بھی نوٹس لیناچاہئے ۔

متعلقہ خبریں