بھارتی جارحیت کا جواب دے سکتے ہیں لیکن خطے کا امن متاثر کرنا نہیں چاہتے

2019 ,مارچ 5



راولپنڈی(مانیٹرنگ ڈیسک): ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے کہا ہے کہ پلوامہ حملے میں پاکستان ملوث نہیں، بھارت کی جانب سے دیے گئے ڈوزیئر پر تحقیقات جاری ہیں۔ پاک فوج کے ترجمان نے کہا ہے کہ 26 سے 28 فروری تک دونوں ممالک کے درمیان کافی تناؤ رہا، پاکستان نے بھارت کے دو جہاز مار گرائے اور اب کنٹرول لائن پر بھارت کی اشتعال انگیزی جاری ہے پاک فوج بھارتی جارحیت کا جواب دینے کے لیے تیار ہے تاہم پاکستان نہیں چاہتا خطے کا امن متاثر ہو۔ میجر جنرل نے کہا کہ نیشنل ایکشن پلان پر تمام جماعتیں متفق تھیں اسی لیے اس پر عمل درآمد کیا جارہا ہے، سسٹم بہتر ہونے سے پاکستان کو ہی فائدہ ہوگا۔ انہوں نے مزید کہا کہ پلوامہ واقعے میں پاکستان کا کوئی ہاتھ نہیں اس واقعے کے بعد پاکستان نے بھارت کو تحقیقات میں ہرممکن تعاون کی پیشکش کی ہے۔

متعلقہ خبریں