کالے جادو کی 2 اقسام کون سی ہیں؟ جانئے وہ بات جو آپ کو معلوم نہیں

2019 ,جنوری 4



کراچی(مانیٹرنگ رپورٹ) جادو ٹونے اور اس کے بداثرات کا ہمارے ہاں خوب چرچا رہتا ہے اور اس معاملے میں لوگوں کی لاعلمی اور کمزور عقائد کا فائدہ اٹھاتے ہوئے جعلی عامل اپنا کاروبار خوب چمکا رہے ہیں۔ جادو کی حقیقت ایک بات ہے مگر اس کے متعلق پائے جانے والے غلط نظریات اور فرسودہ خیالات بالکل ہی دوسرا معاملہ ہے۔

    ویب سائٹ Parhloکی ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ جادو کی دو بڑی اقسام ہیں جن میں سے پہلی ’’سحر حقیقی‘‘ ہے۔ یہ وہ جاد وہے جو کسی انسان یا اس کی زندگی پر سنگین اور انتہائی برے اثرات مرتب کرتا ہے۔ اس کی وجہ سے بیماری، گھریلو ناچاقی، دیگر کئی مسائل حتیٰ کہ موت بھی واقع ہوسکتی ہے۔ 

    جادو کی دوسری قسم ’’سحر تخیلی‘‘ ہے۔ یہ جادو کسی کو مادی نقصان نہیں پہنچاتا بلکہ لوگوں کے تصورات اور تخیلات پر اثرانداز ہو کر کسی خاص مقصد کے حصول میں معاون ثابت ہوتا ہے۔ یہ جادو متاثرہ شخص کے خیالات و نظریات میں تبدیلی کا سبب بن سکتا ہے لیکن عموماً یہ تبدیلی وقتی اور عارضی نوعیت کی ہوتی ہے۔ اس کا مقصد کسی فوری مقصد کا حصول ہوتا ہے جس کے بعد اس کی ضرورت باقی نہیں رہتی۔ جادو کی ان دونوں اقسام کا استعمال بری نیت سے ہو سکتا ہے اور متاثرہ شخص کو ان کی وجہ سے ناپسندیدہ یا تکلیف دہ نتائج کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ 

    علماء بتاتے ہیں کہ اگرچہ ہم جادو سے متاثر ہو سکتے ہیں مگر قرآنی آیات اور مسنون دعاؤں کی مدد سے ہم بآسانی اس مصیبت سے نجات بھی پا سکتے ہیں۔ ایسی صورت میں قرآن و حدیث سے رہنمائی لینی چاہئیے اور جعلی عاملوں اور جادو ٹونے کے نام نہاد ماہرین سے ہر صورت بچنا چاہئیے کیونکہ یہ بدبخت خود بھی گمراہ ہوتے ہیں اور اپنے پاس آنے والوں کو بھی گمراہ کرتے ہیں۔ 

    متعلقہ خبریں