آفریدی کی 37 گیندوں پر سینچری نے پاکستان کرکٹ ٹیم کو تباہ کر کے رکھ دیا۔۔۔ ‘‘ یہ بات شاہد آفریدی کے بارے میں کس نے کہی؟ ناقابلِ یقین نام سامنے آگیا

2019 ,جولائی 22



لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک ) اداکار کاشف محمود نے قومی ٹیم کے سابق کپتان شاہد آفریدی پر کڑی تنقید کرتے ہوئے انہیں پاکستان کرکٹ کی تباہی کا ذمہ دار قرار دیا ہے ۔ اپنے ایک ویڈیو پیغام میں کاشف محمود نے شاہد آفریدی کے بارے میں کہا کہ وہ اچھے انسان ضرور ہوں گے لیکن اس قابل نہیں تھے کہ انہیں قومی ہیرو کا درجہ دیدیا جائے ،انہوں نے شاہد آفریدی کی مشہور زمانہ37گیندوں پر سنچری کو موجودہ کھلاڑیوں میں تکنیک اور سٹیمنا کی کمی قرار دیتے ہوئے کہا کہ اب کھلاڑی اننگز پلان کرکے اپنی ٹیم کے لیے 50اوور کھیلنے کی بجائے ایک اوور میں 4چھکے لگانا چاہتے ہیں ۔کاشف محمود کا کہنا تھا کہ ہماری کرکٹ کی تباہی کا ذمہ دار صرف شاہد آفریدی ہے جس کے باعث ہماری کرکٹ تباہ و بربادہوئی۔انکا مزید کہنا تھا کہ پاکستانی حیران ہوتے ہیں کہ بھارت میں ایک سے بڑھ کر ایک بلے باز کیسے پیدا ہورہا ہے؟،یہ اس لیے ہے کہ بھارت نے سنیل گواسکر جیسے بلے باز کو اپنا”گاڈ فادر“بنایا جن کی تکنیک بہترین تھی ،اس کے بعد سچن ٹنڈولکر بھی ان کے نقش قدم پر چلے اور بھارتیوں کے’بھگوان‘ بن گئے جس کے بعد ویرات کوہلی اور دیگر بلے باز سامنے آئے ہیں،ہم نے عمران خان کو اپنا آئیڈیل بنایا اور اب ہماری کرکٹ کی اتنی تباہی کے بعد بھی ہمیں شاہین شاہ آفریدی جیسا باﺅلر ملا ہے لیکن ہماری تباہی کب شروع ہوئی؟، 20سال پہلے جب ہم نے شاہد آفریدی کو یہ سوچ کر اپنا ہیرو بنایا کہ”اگر آفریدی چل گیا “،اگر ہم نے انضمام الحق ،یونس خان یا محمد یوسف کو اپنی ہیرو بنایا ہوتا تو حالات مختلف ہوتے،مسئلہ آفریدی کی 37گیند وں پر سنچری کے بعد شروع ہواکیوں کہ اس نے ہماری کرکٹ کو ترقی دینے کی بجائے بربادکرکے رکھ دیا۔کاشف محمود کا مزید کہنا تھا کہ وہ شاہد آفریدی کے خلا ف نہیں ،ان کی کبھی آفریدی سے ملاقات بھی نہیں ہوئی ہے لیکن یہ ان کا تجزیہ ہے کہ ہم نے اس کرکٹر کو اپنا ہیرو بنایاجو شاید اچھا انسان تو ہوگا لیکن اچھا کرکٹر نہیں ہے۔کاشف محمود کے خیال میں پاکستان کرکٹ کو ٹھیک کرنے کے لیے کلب کرکٹ کو بھی تبدیل کرنا ہوگا جہاں ہر بلے باز شاہد آفریدی بننے کے چکر میں صرف چوکے چھکے لگانے کی کوشش میں لگا ہوا ہے ۔

متعلقہ خبریں