بالا کوٹ حملہ صرف وارننگ تھی ،پاکستان کا کوئی نقصان نہیں ہوا: مودی کے اپنے وزیر نے جھوٹ کا پول کھول دیا

2019 ,مارچ 4



نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارتی وزیر مملکت سرندرا جیت سنگھ آہلووالیہ نے بالاکوٹ حملے سے متعلق بھارتی انتہا پسند میڈیا کا جھوٹا پروپیگنڈا بے نقاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان میں بھارتی فضائیہ کی کارروائی محض وارننگ تھی اس سے کوئی جانی نقصان نہیں ہوا ۔بھارتی وزیر مملکت برائے الیکٹرونکس و آئی ٹی سرندرا جیت سنگھ آہلووالیہ نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے اس بات کا اعتراف کیا کہ بھارتی کارروائی سے پاکستان میں بڑا نقصان نہیں ہوا، انہوں نے کہا کہ بھارتی حملے کا مقصد پاکستان کو پیغام دینا تھا جانی نقصان پہنچانا نہیں۔بھارتی وزیر نے بھارتی انتہاپسند میڈیا کا جھوٹا پروپیگنڈا بے نقاب کرتے ہوئے کہا کہ بھارت کا مقصد پاکستان کو متنبہ کرنا تھا کہ ہم میں اتنی طاقت ہے کہ ضرورت پڑنے پر کچھ بھی کرسکتے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ کیا بھارتی حملے میں ہونے والی 300 ہلاکتوں سے متعلق نریندرا مودی، بی جے پی کے صدر امیت شاہ یا پارٹی کے ترجمان نے کچھ کہا، کوئی دعوی کیا؟ انھوں نے کہا کہ نہ ہم نے جانی نقصان کا دعویٰ کیا اور نہ ہماری حکومت اس حملے کے بارے میں کوئی ثبوت پیش کرے گی ۔بھارتی وزیر سرندراجیت سنگھ اہلووالیہ نے تسلیم کیا کہ پاکستان میں بھارتی فضائیہ کی کارروائی محض وارننگ تھی تاہم پاکستان میں بڑا نقصان نہیں ہوا۔اس سے قبل کانگریس کے اہم رہنما ڈگ وجے سنگھ نے مودی حکومت سے بالاکوٹ حملے کے تصویری شواہد دینے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا تھا کہ عمران خان کو مبارکباد دیتے ہیں جنہوں نے اچھا ہمسایہ ہونے کا نیا راستہ دکھایا.۔پائلٹ کو واپس بھیجنے کے اقدام پر بھارتی ایوان بالا کے رکن نے وزیراعظم عمران خان کو خراج تحسین بھی پیش کیا۔یاد رہے کہ بھارتی طیاروں نے 25 اور 26 فروری کی درمیانی شب لائن آف کنٹرول کی خلاف ورزی کرتے ہوئے پاکستانی حدود میں داخل ہو کر ایمونیشن گرا کر فرار ہوئے جس کا بھرپور جواب دیتے ہوئے اگلے ہی روز پاک فضائیہ نے دو بھارتی لڑاکا طیارے مار گرائے اور ایک پائلٹ کو بھی گرفتار کیا جسے بعدازاں بھارتی حکام کے حوالے کیا گیا۔

متعلقہ خبریں