امریکی خاتون اول بھی کپتان کے سحر میں گرفتار۔۔۔ وائٹ ہاؤس میں عمران خان سے ملاقات ہوتے ہی بڑا پیغام جاری کر دیا

2019 ,جولائی 22



واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک ) امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی اہلیہ نے وزیراعظم عمران خان سے ملاقات کو شاندار قرار دے دیا، میلانیا ٹرمپ نے پاکستان کے وزیراعظم سے وائٹ ہاوس میں ملاقات کی، بعد ازاں ٹوئٹر پر ملاقات کی تصاویر بھی جاری کر دیں۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان اور امریکی صدر کے درمیان ون آن ون ملاقات ہوئی ہے۔ملاقات کے دوران وزیراعظم عمران خان نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ افغان جنگ کا بات چات کے ذریعے خاتمہ ایک بہترین فیصلہ ہے۔ وزیراعظم عمران خان نے اس دوران امریکی صدر سے کہا کہ امریکا پاکستان کیلئے بے حد اہمیت رکھتا ہے۔ ہماری خواہش ہے کہ دونوں ممالک کے مجموعی تعلقات مزید بہتر ہوں، اور تجارتی تعلقات بھی فروغ پائیں۔وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان امداد کے حصول کی بجائے امریکا کے ساتھ بہتر تجارتی تعلقات کے قیام کا خواہاں ہے۔ ملاقات کے دوران امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اعلان کیا کہ وہ پاکستان کا دوہر کرنے کیلئے تیار ہیں۔ امریکی صدر نے کہا کہ تاحال انہیں پاکستان کے دورے کی دعوت نہیں دی گئی، تاہم اگر وزیراعظم عمران خان دعوت دیں، تو وہ ضرور پاکستان کا دورہ کریں گے۔امریکی صدر ٹرمپ نے مزید کہا کہ عمران خان کے ساتھ ملاقات کو انتہائی خوشگوار دیکھ رہا ہوں، امید ہے ملاقات کے بعد دونوں ممالک کے تعلقات میں بہتری آئے گی۔وزیراعظم عمران خان اور امریکی صدر مین مسکراہٹوں کا تبادلہ بھی ہوا۔ ون آن ون ملاقات کے بعد وزیراعظم عمران خان اور امریکی صدر کے درمیان وفود کی سطح پر نشست بھی ہوگی۔ملاقات میں آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ بھی شریک ہوں گے۔ ملاقات کے دوران امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے گفتگو کرتے ہوئے مزید کہا کہ انہیں پوری امید ہے کہ دونوں ممالک کے تعلقات میں بہتری آئے گی۔ پاکستان افغانستان کے مسئلے کے حل کیلئے ہماری بھرپور مدد کر رہا ہے۔ ہم کافی وقت ساتھ گزاریں گے اور پاکستان کے معاملات پر بھی جات ہوگی۔اگر معاملات حل ہوگئے تو پاکستان کی امداد بحال کر سکتے ہیں۔ اس سے قبل وزیراعظم عمران خان واشنگٹن ڈی سی میں امریکی صدر سے ملاقات کیلئے وائٹ ہاؤس پہنچے۔ وائٹ ہاؤس پہنچنے پر امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے وزیراعظم عمران خان کا استقبال کیااور مصافحہ کیا۔دونوں ممالک کے سربراہان کے درمیان ملاقاتوں کے دوران بڑے بریک تھرو کا امکان ظاہر کیا جا رہا ہے۔ جبکہ بتایا جا رہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کے اس دورے کے دوران امریکا پاکستان کو آزادانہ تجارتی معاہدے کی پیش کش بھی کر سکتا ہے۔

متعلقہ خبریں