والد اورپھپو کی گرفتاری کے بعد بلاول بھٹو باہر نکل آئے ۔۔ اب کیا کرنے جا رہے ہیں ؟ بڑے اعلانات کر دیئے

2019 ,جون 15



لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ غریب اور عوام دشمن بجٹ کیخلاف سڑکوں پر نکل رہے ہیں، جتنے مرضی مقدمے بنا لیں اور سب کو جیل میں بھیج دیں، عوام کے حقوق پر سمجھوتہ نہیں کریں گے۔پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے پارٹی رہنماء اسلم گل کے بھائی کی وفات پر تعزیت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا صوبوں کےحقوق اوروسائل پرڈاکاڈالاجارہاہے، معاشی حملےہورہےہیں یہ بڑی ناانصافی ہے، پرانے پاکستان میں پنجاب کا بجٹ600 بلین ہوتا تھا اب 230بلین ہے۔بلاول بھٹو کا کہنا تھا پی ٹی آئی کےنئےپاکستان میں عوام سےناانصافی کی جارہی ہے، معاشی بحران کی وجہ سے4ملین پاکستانی غربت کی لکیر سے نیچے آچکے ہیں، پی ٹی آئی کی پالیسیاں ایسی ہی رہیں تومزیدلوگ غریب کی لکی رسے نیچےآئیں گے۔پی پی چیئرمین نے کہا ملک کےوزیراعظم کوسفارتی آداب کابھی علم نہیں، چوروں اورڈاکوؤں کیلئےایمنسٹی اسکیمزلائی جاتی ہیں، پاکستان کے عوام ، کسانوں اور مزدوروں کیلئےکوئی اسکیم نہیں۔ان کا کہنا تھا پاکستان کےعوام بہادرہیں،ہم سب مل کرملک کیلئےجدوجہدکریں گے ، پنجاب کانوجوان حکومت کی معاشی دہشت گردی کابوجھ اٹھائے گا، معاشی صورتحال پر پیپلزپارٹی کاآوازبلندکرناحق ہے، عوام اور پیپلزپارٹی معاشی دہشت گردی برداشت نہیں کریں گے۔بلاول بھٹو نے کہا پہلےبھی کہاتھاعوام دشمن بجٹ پیش کیاگیاتوہم سڑکوں پرنکلیں گے، آصف زرداری کوبجٹ سےایک دن پہلےگرفتارکیاگیا، ہمارے پاس موقع تھا آصف زرداری کی گرفتاری پرایوان کابائیکاٹ کرتے، عوام دشمن بجٹ ملک کی معاشی خودکشی ہے۔چیئرمین پی پی کا کہنا تھا عمران خان نے کہا تھا آلیکن انہوں نے آئی ایم ایف کے پاس جا کر ساری عوام کو معاشی خودکشی پر مجبور کر دیا ہے۔ اس بجٹ کیخلاف آواز اٹھانا ہمارا فرض ہے۔ جتنے مرضی مقدمے بنا لیں اور سب کو جیل میں بھیج دیں لیکن پی پی عوام کے حقوق پر سمجھوتہ نہیں کرے گی۔ حکومت کے پاس کوئی پلاننگ نہیں۔

متعلقہ خبریں