اتحاد ایک بار پھر ٹوٹ گیا۔۔۔ رات گئے مولانا فضل الرحمان کی سیاست کے حوالے سے ناقابلِ یقین خبر آگئی

2019 ,مارچ 11



لاہور ( مانیٹرنگ ڈیسک ) جماعت اسلامی کی قیادت نے فیصلہ کرلیا ہے ، اب وہ متحدہ مجلسِ عاملہ کے ساتھ مل کر الیکشن نہیں لڑیں گے ، اس سے پہلے پانچ مختلف مذہبی جماعتیں مل کر الیکشن میں حصہ لیتی رہی ہیں البتہ اب وہ اپنی الگ سیاسی پہچان بنائیں گے. جماعتِ اسلامی کی قیادت نے فیصلہ کر لیا ہے کہ انہیں اب متحدہ مجلس عاملہ کا مزید حصہ نہیں رہنا ، گزشتہ الیکشن مین جماعت اسلامی کراچی سے الیکشن جیتنے میں ناکام رہی تھی حالانکہ کراچی میں جماعت اسلامی کو بہت مضبوط سمجھا جاتا تھا ، انہی وجوہات کی بنا پر پچھلے کچھ عرصے سے جماعت اسلامی ایم ایم اے سے علیحدگی پر غور کر رہی تھی ، جنوری میں بھی جماعت اسلامی کے سربراہ سراج الحق نے کہا تھا کہ جماعتِ اسلامی متحدہ مجلس عاملہ سے علیحدگی اختیار کر رہی ہے لیکن اب جماعت اسلامی کی قیادت اور شوری نے باقاعدہ علان کر دیا ہے کہ اگلے الیکشن میں جماعتِ اسلامی ذاتی حیثیت میں الیکشن میں حصہ لے گی۔ متحدہ مجلسِ عاملہ 2002 میں وجود میں آئی تھی لیکن 2008 میں اسے تحلیل کر دیا گیا تھا ، اس کے بعدالیکشن سے چند ماہ پہلے 2017میں دوبارہ ایم ایم اے قائم کی گئی ، لیکن2018کے الیشن میں جماعتِ اسلامی خیبر پختونخواہ سے ایک بھی صوبائی اسمبلی کی سیٹ حاصل نہیں کر سکی اس لیے اب جماعتِ اسلامی نے کہا ہے کہ متحدہ مجلسِ عاملہ اپنے مقاصد حاصل کرنے میں ناکام رہی ہے اس لیے اب مزید اس کے ساتھ جڑے رہنے کا فائدہ نہیں ہے ، جماعتِ اسلامی اگلے الیکشن میں اپنی جماعت کی الگ شناخت سے حصہ لے گی۔ اب وہ متحدہ مجلسِ عاملہ کے ساتھ مل کر الیکشن نہیں لڑیں گے۔ اس سے پہلے پانچ مختلف مذہبی جماعتیں مل کر الیکشن میں حصہ لیتی رہی ہیں البتہ اب جماعت اسلامی نے فیصلہ کیا ہے کہ وہ اپنی الگ سیاسی پہچان بنائیں گے

متعلقہ خبریں