نئے مشیرخزانہ حفیظ شیخ کا پہلا چھکا ۔۔۔ پاکستان روپیہ ببر شیر بن کر ڈالر پر جھپٹ پڑا ، ڈالر کی نئی قیمت آتے ہی پوری قوم ہکا بکا رہ گئی

2019 ,اپریل 24



کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک ) اوپن کرنسی مارکیٹ میں پاکستانی روپے کے مقابلے میں امریکی ڈالر مزید20پیسے سستا ہوگیا جب کہ یورو،برطانوی پاونڈ ، سعودی ریال اوریو اے درہم کے مقابلے میں بھی پاکستانی روپے کی قدر میں بہتری ریکارڈ کی گئی البتہ انٹر بینک میں امریکی ڈالر کی قدر میں2پیسے کا اضافہ ہوا۔فوریکس ایسوسی ایشن آف پاکستان کے مطابق بدھ کو انٹر بینک میں پاکستانی روپے کے مقابلے میں امریکی ڈالر کی قیمت خرید 141.40روپے سے بڑھ کر141.42روپے اور قیمت فروخت 141.50روپے سے بڑھ کر141.52روپے ہوگئی جب کہ اوپن مارکیٹ میں امریکی ڈالر کی قیمت خرید141.70روپے سے گھٹ کر141.50روپے اور قیمت فروخت142.20روپے سے گھٹ کر141روپے ہوگئی ۔دیگر کرنسیوں میں یورو کی قیمت خرید 159روپے سے گھٹ کر158.50روپے جب کہ قیمت فروخت160.75روپے سے گھٹ کر160.20روپے ہوگئی ۔برطانوی پاونڈ کی قیمت خرید183.75روپے سے گھٹ کر183روپے اورقیمت فروخت185.50روپے سے گھٹ کر184.80روپے ہوگئی ۔فاریکس رپورٹ کے مطابق سعودی ریال کی قیمت خرید37.70روپے سے گھٹ کر37.65روپے اور قیمت فروخت38روپے سے گھٹ کر37.90روپے ہوگئی جب کہ یو اے ای درہم کی قیمت خرید38.65روپے سے گھٹ کر 38.60روپے اور قیمت فروخت 38.95روپے سے گھٹ کر38.90روپے ہوگئی ،چینی یو آن کی قیمت خرید 21.80روپے سے گھٹ کر21.20روپے اور قیمت فروخت 23.20روپے سے گھٹ کر22.80روپے ہوگئی۔ دوسری جانب جنوبی کوریا نے پاکستان کو 50 کروڑ ڈالرز کا قرضہ دنے کا اعلان کیا ہے۔ پاکستان اور جنوبی کوریا کے درمیان اس حوالے سے معاہدہ طے ہو گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق جنوبی کوریا سے 50 کروڑ ڈالر کا قرضہ لینے کے لیے پاکستان نے معاہدہ کر لیا۔ اس معاہدے کے تحت جنوبی کوریا پاکستان کو پچاس کروڑ ڈالر کا قرضہ دے گا۔جنوبی کوریا کے سفیر اور سیکریٹری اکنامک افیئرز نور احمد نے قرضے کے معاہدے پر دستخط کر دیے ہیں۔معاہدے پر دستخت کی تقریب میں مشیر خزانہ عبد الحفیظ شیخ موجود تھے۔ جنوبی کوریا نے یہ قرضہ پاکستان کو طویل مدتی اور آسان شرائط پر دیا ہے۔ جنوبی کوریا کی جانب سے دیے جانے ولے قرضے کی رقممواصلات، زراعت، صحت، آئی ٹی اور توانائی کے شعبوں پر خرچ کی جائے گی۔جنوبی کوریا نے پاکستان کے ریلوے کے محکمے میں سرمایہ کاری میں دل چسپی کا اظہار کیا ہے۔ جنوبی کوریا کے سفیر نے پاکستان میں سیاحت کے شعبے پر اعتماد ظاہر کیا ہے۔ اس سے پہلے رواں سال کے دوران 17 جنوری کو وزیر اعظم عمران خان کے معاون خصوصی زلفی بخاری نے جنوبی کوریا کے سفیر سے ملاقات کی تھی جس میں جنوبی کوریا میں کام کرنے والے پاکستانیوں کے کوٹے میں اضافے پر بھی اتفاق کیا گیا تھا۔وزیر اعظم عمران خان کے معاون خصوصی زلفی بخاری نے کہا تھا کہ 2018میں 700 پاکستانی کام کرنے کے لیے جنوبی کوریا گئے تھے لیکن اس سال اس تعداد کو بڑھانے پر کام کیا جا رہا ہےاور پاکستانیوں کے لیے بیرونِ ممالک میں کام کے زیادہ سے زیادہ مواقع پیدا کیے جا رہے ہیں۔

متعلقہ خبریں