نریندر مودی کو بھارتی انتخابات سے قبل ہی چاروں شانے چِت کرنے کا عزم۔۔۔۔ عمران خان نے ایسا فیصلہ کر لیا کہ پورے بھارت میں ہلچل مچ گئی

2019 ,مارچ 11



اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان نے بھارت کی جانب سے فراہم کیے جانے والے پلوامہ حملے کے ڈوزیئر کا جواب بھارتی لوک سبھا کے الیکشن سے پہلے دینے کا فیصلہ کرلیا ہے۔سفارتی ذرائع کا کہنا ہے کہ بھارت نے اپنا طیارہ پاک فضائیہ کے ہاتھوں تباہ ہونے کے بعد پلوامہ حملے کا ڈوزیئر پاکستان کے حوالے کیا تھا۔ اس ڈوزیئر میں قابل عمل شواہد پیش نہیں کیے گئے۔پلوامہ ڈوزیئر کا جواب بھارت میں ہونے والے لوک سبھا الیکشن سے پہلے دیا جائے گا۔ذرائع نے بتایا کہ بھارت کی دراندازی سمیت سفارتی محاذ پر بھی پاکستان کا بھارت کو جواب انتہائی موثر تھا۔ پاک بھارت کشیدگی میں کمی آئی ہے، کشیدگی کے دوران پاکستانی قوم متحد اور بھارت میں تقسیم نظر آئی، پاکستانی قوم کے اتحاد کے باعث کشیدگی کم ہوئی۔سفارتی ذرائع کا کہنا ہے کہ جمعرات کو کرتار پور راہداری معاہدے پر مذاکرات ہوں گے جبکہ بھارتی وفد کو 28 مارچ کو اسلام آباد میں خوش آمدید کہا جائے گا۔ کالعدم تنظیموں کے خلاف کارروائی کسی کے کہنے پر نہیں کی جارہی، غیر ملکی صحافیوں کو جلد بالا کوٹ کا دورہ کرایا جائے گا۔خیال رہے کہ ہر محاذ پر شکست کھانے کے بعد بھارت نے پاکستان کی پلوامہ واقعہ کی تحقیقات کی پیشکش قبول کرتے ہوئے ڈوزئیر پاکستان کے حوالے کیا تھا،اس حوالے سے بھارتی ترجمان نے دعویٰ کیا تھا کہ بھارت نے پلوامہ واقعہ کی تحقیقات کی پاکستانی پیشکش قبول کرتے ہوئے ڈوزیئر پر مبنی تحقیقاتی تقاضا سفارتی طور پر پاکستان کے حوالے کردیا ہے۔ بھارت نے وزیراعظم عمران خان کی تقریرکے بعد ڈوزیئر نئی دہلی میں پاکستان کے قائم مقام ہائی کمشنرکے حوالے کیا۔ ڈوزئیر میں پلوامہ واقعہ کی تفصیلات شامل ہیں۔بھارتی ترجمان کے مطابق بھارت نے پاکستان کو دیئے جانے والے ڈوزیئر میں گرفتار بھارتی پائلٹ کے حوالے سے بھی تفصیلات کا مطالبہ کیا ہے۔اضح رہے مقبوضہ کشمیرمیں زوردار کار بم دھماکے میں 44 بھارتی فوجی ہلاک اور درجنوں زخمی ہوگئے تھے، ہر بار کی طرح اس بار بھی بھارت نے بغیر کسی ثبوت کے حملے سے متعلق پاکستان پر الزامات عائد کیے ہیں تاہم پاکستان نے بھارتی الزامات کو مسترد کردیا ہے۔

 

متعلقہ خبریں