’’پاکستانی ٹیم کو سدھارنا ہے تو اس دبنگ کھلاڑی کو کوچ بنا دیں۔۔۔۔‘‘ نام جان کر آپ بھی دنگ رہ جائیں گے

2019 ,اگست 5



لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے ساتھ منسلک سینئر کھلاڑی نے سابق سری لنکن کپتان مہیلا جے وردھنے کو قومی ٹیم کا کوچ بنانے کی تجویز دیدی ہے۔تفصیلات کے مطابق ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کا کوچ وہ ہونا چاہئے جس نے تینوں طرز کی کرکٹ کھیلی ہو اور اس حوالے سے مہیلا ایک بہترین انتخاب ہیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ مہیلا جے وردھنے اس وقت انڈین پریمیر لیگ (آئی پی ایل) میں کوچنگ کے فرائض سرانجام دے رہے ہیں جہاں انہیں خاصی رقم بھی ملتی ہے جبکہ پی سی بی کیلئے اتنے پیسے دینا ممکن نہیں ہو گا اس لئے مذکورہ تجویز پر غور کئے جانے کے امکانات بھی کم ہیں۔ دوسری جانب قومی کرکٹ ٹیم کے کوچ مکی آرتھر نے کرکٹ کمیٹی کے اجلاس میں اپنے معاہدے میں دو سال اضافے کی درخواست دی ہے۔ ذرائع کے مطابق آرتھر نے کمیٹی اجلاس میں لوکل کوچ کو بطور اسسٹنٹ رکھنے کی تجویز پیش کی ہے تاکہ وہ ان کے نائب کی حیثیت سے کام سیکھ کر وقت آنے پر بطور کوچ ان کی جگہ لے سکیں۔ذرائع کے مطابق پاکستان کرکٹ بورڈ(پی سی بی) مکی آرتھر کے معاہدے کے حوالے سے سینئر کرکٹرز سے رائے طلب کرنے کے بارے سوچ رہا ہے۔جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق پاکستان کرکٹ ٹیم کی آئی سی سی کرکٹ ورلڈکپ 2019ءمیں ناقص کارکردگی کے بعد سرفراز احمد کو کپتانی سے ہٹائے جانے کی باتیں گردش کر رہی ہیں مگر اب یہ انکشاف ہوا ہے کہ انہیں کپتانی سے ہٹانے کی تجویز کسی اور نے نہیں بلکہ ہیڈ کوچ مکی آرتھر نے ہی دی ہے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق مکی آرتھر نے سرفراز احمد کو کپتانی سے ہٹا کر محدود اوورز کی کرکٹ میں شاداب خان اور ٹیسٹ ٹیم کا کپتانی بابراعظم کو دینے کی تجویز پیش کی ہے۔ ذرائع کے مطابق پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے منیجنگ ڈائریکٹر (ایم ڈی) وسیم خان کی زیر صدارت کرکٹ کمیٹی کے اجلاس میں مکی آرتھر نے سرفراز احمد کی کپتانی کی صلاحیتوں سے متعلق کچھ منفی باتیں بتائیں۔ذرائع کا کہنا ہے کہ مکی آرتھر کی جانب سے سرفراز احمد کو کپتانی سے ہٹانے کی تجویز دینا حیران کن ہے کیونکہ سرفراز احمد نے ہمیشہ مکی آرتھر کے ساتھ بھرپور تعاون کیا ہے اور تقریباً ان کی ہر بات مانتے تھے لیکن اس کے باوجود ہیڈ کوچ نے ان سے کپتانی واپس لینے کی تجویز دی ہے۔

متعلقہ خبریں