اچھا تو یہ بات تھی: آرٹیکل 370 بھارت کو کیوں کھٹکتا تھا؟ بھارت کی بڑی کمزوری نے بین الاقوامی سطح پر تہلکہ مچا دیا

2019 ,اگست 5



اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک): ماہر بین الاقوامی امور احمر بلال صوفی نے کہا ہے کہ آرٹیکل 370 مقبوضہ کشمیر میں بھارتی عزائم کی راہ میں آئینی رکاوٹ تھا۔انہوں نے کہا کہ آرٹیکل 370 بی جے پی کی انتخابی مہم کے بیانیے سے متصادم ہے، بی جے پی کی آرٹیکل 370 کو ختم کرنے کی خواہش بہت پرانی ہے۔احمر بلال صوفی نے مزید کہا کہ پاکستان کو فوری اقوام متحدہ کی سیکیورٹی کونسل کا اجلاس طلب کرنے کی درخواست دینی چاہیے۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ عالمی برادری کی توجہ دلانا ہوگی کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارت کے اقدامات عالمی امن کے لیے خطرہ ہیں۔دوسری جانب دفاعی تجزیہ کار بریگیڈئیر ریٹائرڈ حارث نواز نے کہا ہے کہ پاکستان کشمیر کی آواز ہے۔انہوں نے یہ بھی کہا کہ پاکستان کو ایک طاقتور ردِ عمل کی صورت میں دنیا کو بتانا ہوگا کہ ہم بھارتی حکومت کے کشمیریوں کے حقوق غصب کرنے کے گھناونے عزائم کسی صورت قبول نہیں کریں گے۔ جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق بھارتی فورسز نے مقبوضہ کشمیر کی سابق وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کوگرفتار کرلیا ہے ، محبوبہ مفتی کو ایک روز قبل گھر میں نظر بند کیا گیا تھا ۔جیونیوز کے مطابق بھارت کی قابض فورسز نے دہشت گردی کا مظاہرہ کرتے ہوئے مقبوضہ کشمیر کی سابق وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کوگرفتار کرلیاہے ۔واضح رہے کہ بھارتی فورسز نے ایک روز قبل مقبوضہ کشمیر کے سابق وزرائے اعلیٰ محبوبہ مفتی اور عمر عبد اللہ کو گرفتار کرلیا تھا جس پر دونوں کشمیر رہنماﺅں نے اپنے ٹوئٹس میں کشمیریوں کو پیغام دیا تھا ۔ نظر بندی کے بعد اپنے ایک ٹوئٹ میں محبوبہ مفتی نے کہا کہ یہ کتنا ظالمانہ رویہ ہے کہ ہم جیسے منتخب نمائندوں کوجنہوں نے ہمیشہ امن کیلئے جدوجہد کی نظر بند کردیا گیاہے ۔ انہوں نے کہا کہ دنیا دیکھ رہی ہے کہ کس طرح مقبوضہ کشمیر کے باشندوں اور ان کی آواز کوکچلا جارہاہے ،یہ وہ کشمیر ہے جس نے ایک سیکولر اور جمہوری انڈیا کا انتخاب کیا تھا ۔ اب کشمیر کو انتہائی ناقابل بیان رویے کا سامنے ہے ۔ انہوں نے انڈیا کے لوگوں سے بیدار ہونے کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ انڈیا جاگ جاﺅ ۔سابق وزیر اعلیٰ عمر عبد اللہ نے اپنے ٹوئٹ میں کشمیریوں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ ہم نہیں جانتے کہ ہمارے ساتھ کیا ہونیوالا ہے لیکن میں اس بات پر پختہ یقین رکھتا ہوں کہ اللہ قادر مطلق کی طرف سے جو بھی منصوبہ بندی کی جاتی ہے وہ ہمیشہ بہتر ہوتی ہے ۔انہوں نے کہا کہ ہم شائد اللہ کی حکمتوں کودیکھ نہ پائیں لیکن ہم کو ان میں شک نہیں کرنا چاہئے ۔ اللہ کرے کہ آپ سب کیلئے بہتری ہو ، آپ محفوظ اور پرسکون رہیں ۔

متعلقہ خبریں