کنکٹنگ فلائٹ نے 33 سال بعد ماں بیٹی کو ملادیا

2019 ,جنوری 18



دبئی(مانیٹرنگ ڈیسک): دبئی ایئرپورٹ کے حکام کی کاوشوں نے 33 سال بعد ماں بیٹی کو ملا دیا۔  بیٹی کے والدین میں علیحدگی کے بعد باپ اپنی بیٹوں کو لے کر کسی اور جگہ منتقل ہوگیا تھا اس وقت بہنوں میں سب سے بڑی بہن 6 سال کی تھی۔ طلاق کے بعد والدہ نے امارتی شہری سے شادی کرلی تاہم اس کے دل میں ممتا جاگتی رہی، اولاد سے ملنے کی خواہش اسے متحدہ عرب امارات کھینچ لائی جہاں  اس نے بیٹیوں سے ملنے کی سر توڑ کوششیں شروع کردیں۔

والدہ نے کسی طرح اپنی بڑی بیٹی کا کھوج لگا لیا جو کہ رشتہ ازدواج میں منسلک ہوچکی تھی لیکن دوسرے ملک ہونے کی وجہ سے ماں بیٹی کی ملاقات ممکن نہ تھی۔ اس دوران  بیٹی کو علاج کی غرض سے بھارت جانا پڑا تو کنیکٹنگ فلائٹ دبئی سے تھی۔والدہ نے دبئی حکام کو درخواست کی کہ بیٹی براستہ دبئی بھارت جارہی ہے اور منسلک پرواز کچھ گھنٹے بعد دبئی ایئرپورٹ سے اڑان بھرے گی  لہذا بچھڑی ہوئی بیٹی سے ملنے کے لیے کوئی بندوبست کیا جائے۔ خاتون کی درخواست پر ایئرپورٹ حکام حرکت میں آئے اور انہوں نے مطلوب خاتون کی تلاش شروع کردی۔ حکام کا کہنا ہے کہ تین گھنٹے کی تلاش کے بعد تصدیق ہونے پر ماں بیٹی کو ملا دیا گیا۔ برسوں بعد ملنے والی ماں بیٹی ایک دوسرے کو دیکھ کر آبدیدہ ہوگئیں اور انہوں نے اس خوبصورت تحفے پر حکام کا شکریہ ادا کیا۔

متعلقہ خبریں