کراچی میں لڑکی فیس بُک پر بننے والے دوست سے ملنے پہنچ گئی ہراساں کرنے پر لڑکی نے ایسا کام کر ڈالا کہ گھر والو ں کے بھی پیرو ں تلے زمین نکل گئی

2019 ,مارچ 25



کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک ) کراچی میں لڑکی فیس بک پر دوست بننے والے لڑکے سے ملنے پہنچ گئی۔ لڑکے نے گاڑی میں ہراساں کرنا شروع کیا تو لڑکی نے چلتی گاڑی سے خودکشی کر لیسی وی پر لڑکی نے چلتی گاڑی چھلانگ لگا دی۔پولیس نے لڑکے اور لڑکی کو حراست میں لے کر تھانے منتقل کر دیا۔پولیس نے دونوں کے والدین کو طلب کر کے تنبیہ کرتے ہوئے حوالے کر دیا۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ ساحلی علاقے سی ویو کے ساحل کے سامنے سڑک پر ایک لڑکی نے اچانک چلتی ہوئی کار سے چھلانگ دی اور چیخ و پکار کر کے دوڑنا شروع کر دیا جس پر قریب موجود پولیس موقع پر پہنچ گئی اور لڑکی کو تحویل میں لیتے ہوئے کار میں موجود ایک نواجوان کو حراست میں لینے کے بعد تھانے منتقل کر دیا۔،ایس ایچ او غزالہ پروین نے بتایا کہ لڑکی نے اپنے بیان میں کہا کہ اس کی سوشل میڈیا کے ذریعے سے ایک نوجوان سے دوستی ہوئی۔دونوں کی دوستی دو ماہ قبل ہوئی تھی اور اتوار کو میں نے کالج کے کام جانے کا بہانہ کیا اور لڑکے سے ملنے چلے آئی،ابھی میں کار میں بیٹھی تھی کہ لڑکے نے مجھے جنسی طور پہپر ہراساں اور اور دست درازی بھی جس پر میں نے خوفزدہ کو کر چھلانگ لگا دی۔انہوں نے مزید بتایا کہ لڑکے اور لڑکی نے اپنے بیان میں یہی بات کہی اور اس کی تصدیق کے لیے دونوں موبائل فون چیک کیے جس میں تمام ریکارڈ موجود تھا۔دوںوں کے والدین کو تھانے طلب کیا اور تمام صورتحال سے آگاہ کیا اور دونوں کے والدین کو تنبیہ کرتے ہوئے حوالے کر دیا.واضح رہے نوجوان لڑکی نے کراچی میں گورا قبرستان کے قریب چلتی ہوئی گاڑی سے چھلانگ لگا دی۔ لڑکی کے چھلانگ لگانے پر آس پاس کی ٹریفک جام ہو گئی جبکہ شارع فیصل پر بھی ٹریفک کی روانی متاثر ہوئی۔ متاثرہ لڑکی نے بیان دیا کہ میں آن لائن ٹیکسی سروس پر سفر کر رہی تھی۔ ٹیکسی ڈرائیور نے مجھے ہراساں کرنے کی کوشش کی جس پر میں نے اپنی عزت بچانے کے لیے مجبوراً چلتی گاڑی سے چھلانگ لگا دی۔

متعلقہ خبریں