انا للہ وانا الیہ راجعون:لاکھوں دلوں پر راج کرنے والی پاکستان کی نامور اداکارہ انتقال کر گئیں

2019 ,اپریل 23



لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک ) پاکستان فلم انڈسٹری کی سینئر اداکارہ سیمابیگم گزشتہ روز کسمپرسی کی حالت میں جہان فانی سے کوچ کرگئیں جن کی وفات بارے میڈیا اور فلم انڈسٹری سے وابستہ افرادکو بھی ایک دن بعد پتہ چلا جس کی وجہ سے کوئی بھی ان کی نمازجنازہ میں شرکت نہ کرسکا۔سیمابیگم دس سال سے بیماری کی حالت میں اکیلی نہایت غربت کی زندگی گزاررہی تھیں کیونکہ نہ تو ان کا کوئی رشتہ دار تھا اور نہ ہی کوئی اولاد۔پانچ سال قبل جب راقم الحروف نے ان کا انٹرویو کیا اس وقت وہ علامہ اقبال ٹاؤن میں کرائے کے ایک نہایت بوسیدہ گھر میں مقیم تھیں جہاں ان کے پاس چند برتن اور کچھ کپڑے تھے۔سیما بیگم نے چھ سو کے لگ بھگ فلموں میں کام کیا تھا۔انہوں نے زیادہ تر فلموں میں سپورٹنگ رول کئے۔ان کا اصل نام شمیم کوثر تھا۔ان کا تعلق لاہور کے علاقے گڑھی شاہو سے تھا جہاں سے انہوں نے ایف تک تعلیم حاصل کی۔ان کی دوستی گلوکارہ نسیم بیگم سے تھیں جو انہیں فلمساز شباب کیرانوی کے پاس لے کر گئیں جہاں انہیں پنجابی فلم لاڈلی میں کاسٹ کرلیا گیا۔سیما بیگم کے بقول لاڈلی ہی ان کے کیرئر کی پہلی فلم تھی جس کے بعد ان کا فلمی کیرئر شروع ہوگیا۔پہلی فلم میں وہ اداکارحبیب کی ہیروئین تھیں۔اس کے بعد انہیں نخشب جارجوی کی فلم مے خانہ میں کاسٹ کیا گیا۔انہوں نے چند فلموں میں بطور ہیروئین بھی کام کیا لیکن انہیں سپورٹنگ قسم کے کرداروں میں زیادہ شہرت ملی۔سیمابیگم نے عدنان نامی شخص سے شادی کی تھی جن کا فلمی دنیا سے کوئی تعلق نہیں تھا۔یہ شادی دوسال بعد ختم ہوگئی جس میں سے کوئی اولاد نہیں تھی۔انہوں نے شادی نہیں کی۔سیما بیگم نے کئی فلمیں بھی بنائیں جن میں ایک فلم کرکٹر بھی تھی جس کے مرکزی کردار کے لئے عمران خان کو پیشکش کی تھی لیکن انہوں نے انکار کردیا تھا۔

متعلقہ خبریں