پاکستان کرکٹ بورڈ نے نئے ’ ہیڈ کوچ‘ کے نام کا اعلان کر دیا

2019 ,اگست 26



لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک ) پاکستان کرکٹ بورڈ نے اعجاز احمد کو قومی انڈر 19 کرکٹ ٹیم کا ہیڈ کوچ مقرر کردیا۔سابق کرکٹر اعجاز احمد کی تقرری 3 سال کے لیے کی گئی ہے ۔اعجاز احمد قومی انڈر 16 اور اے کرکٹ ٹیموں کے ساتھ بھی کام کریں گے ۔اعجاز احمد اے سی سی انڈر 19 ایشیا کپ کے بعد اپنے عہدے کا چارج سنبھالیں گے۔آئندہ ماہ قومی اے کرکٹ ٹیم کی کینیا میں 8 ملکی ٹورنامنٹ میں شرکت اعجاز احمد کی پہلی اسائمنٹ ہوگی۔بنگلہ دیش انڈر 16 کرکٹ ٹیم کی پاکستان آمد اور ایمرجنگ ایشیا کپ میں بھی اعجاز احمد ذمہ داریاں نبھائیں گے۔آئندہ سال قومی انڈر 19 کرکٹ ٹیم کو آئی سی سی انڈر 19 کرکٹ ورلڈ کپ میں شرکت کرنی ہے۔اعجاز احمد کا انتخاب وسیم خان اور مدثر نذر پر مشتمل کمیٹی نے کیا ہے۔کمیٹی نے عہدے کے لیے خواہشمند دیگر سابق کرکٹرز کے انٹرویوز کے بعد اعجاز احمد کا نام فائنل کیا۔ اعجاز احمد کا کہنا ہے کہ اہم ذمہ داری سونپے جانے پر پاکستان کرکٹ بورڈ کا مشکور ہوں، اپنے تجربے کی بنیاد پر قومی جونیئر کرکٹ کی بہتری میں کردار ادا کروں گا۔ دوسری جانب لیجنڈری فاسٹ باﺅلر وقار یونس نے باﺅلنگ کوچ کیلئے درخواست دینے کی تصدیق کر دی، ان کے مطابق وہ ہیڈکوچ کے امیدوار بھی بن سکتے ہیں البتہ اس حوالے سے ابھی حتمی فیصلہ نہیں کیا۔ایک انٹر ویو کے دوران وقار یونس نے کہا کہ میں نے باﺅلنگ کوچ کیلئے درخواست جمع کرا دی ہے، ابھی آخری تاریخ میں1 دن باقی ہے، شاید میں ہیڈ کوچ کیلئے بھی اپلائی کر دوں تاہم مجھے ایسا لگتا ہے کہ میں ابھی ذہنی طور پر اس کیلئے تیار نہیں ہوں، کوشش کروں گا کہ باﺅلنگ کے شعبے میں پاکستان کی مدد کر سکوں۔انھوں نے کہا کہ یہ تاثر غلط ہے کہ میں کسی کے تحت کام نہیں کر سکتا، میں نے بہت سے کوچز کے ساتھ رہ کر ہی کوچنگ سیکھی تھی،آجکل یہ کوئی بات نہیں کہ کون کتنا بڑا پلیئر ہے،سٹیو وا نے پلیئرز کی رہنمائی کی ، رکی پونٹنگ نے بھی جسٹن لینگر کے تحت کام کیا،اس سے فرق نہیں پڑتا کہ ہیڈ کوچ کون ہے، اصل چیز یہ ہے کہ آپ کیسے کام کرتے ہیں، مجھے کوچنگ کا تجربہ اور میں اپنے دائرہ کار سے واقف ہوں، کون کوچ آئےگا یا میرے رتبے پر اس سے کیا فرق پڑے گا میں اس حوالے سے نہیں سوچ رہا، میں ٹیم کی بہت مددکر سکتا ہوں۔

متعلقہ خبریں