حکومت کا انتہائی سخت فیصلہ ۔۔۔سکولوں میں بچوں کی پٹائی کرنے والے اُساتذہ کے حوالے سے بڑا قدم اُٹھا لیا، والدین خوشی سے نہال

2019 ,اپریل 30



اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک ) حکومت نے سکولوں میں بچوں کی پٹائی کیخلاف بل لانے کا فیصلہ کرلیا، وفاقی معاون خصوصی اطلاعات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ سکولوں میں بچوں کو مارنے پر استاد کیخلاف کریمنل کیس درج ہوگا،سب جانتے ہیں جو سکولوں میں پڑھ چکے، استاد کا ایک تھپڑ ہی اس عمر میں کان کے پردے پھاڑ دیا کرتا تھا۔ انہوں نے وفاقی کابینہ کے اجلاس کے بعد میڈیا بریفنگ میں بتایا کہ کابینہ اجلاس کا 13نکاتی ایجنڈا تھا، کابینہ نے وزیراعظم کو کامیاب دورہ چین کی مبارکباد پیش کی۔فری ٹریڈ ایگریمنٹ ، ایم ایل ون ، زراعت، غربت کے خاتمے سمیت دیگر دوطرفہ معاہدے کیے گئے، کابینہ نے وزیراعظم کو مبارکباد دی ہے۔انہوں نے کہا کہ رمضان شریف میں وفاقی اداروں میں دفاترز کے اوقات کارصبح 10بجے سے شام 4بجے تک کردیا جائے۔تاکہ روزہ داروں کو آسانی بھی ہواور کام کی صلاحیت بھی متاثر نہ ہو۔فردوس عاشق اعوا ن نے کہا کہ بلدیاتی نظا م کے تحت نچلی سطح پر اختیارات کی منتقلی کرنے جا رہے ہیں، اس کے حوالے سے ساتھ بل کابینہ کے سامنے لائے گئے ہیں،لیگل جسٹس اتھارٹی کا قیام کیا جائے گا۔ہمارے معاشرے میں سب سے بڑا چیلنج خواتین کو وراثت میں حق دینے متعلق ہے، اس کیلئے بل لایا جا رہا ہے، بل سے خواتین کو وراثت میں حق ملنے کا تحفظ ملے گا۔انہوں نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کا نظریہ ہے کہ لوگوں کو فوری سستا انصاف فراہم کرنا، کوڈ آف سول پروسیجرلا رہے ہیں، دیوانی مقدمات کو ڈیڑھ سے دو سال میں حل کرنے کیلئے قانونی سازی کی جائے گی۔بچوں سے زیادتی کے واقعات روکنے کیلئے زینب الرٹ بل لا رہے ہیں۔بل کا نام زینب اس لیے رکھا گیا ہے کیونکہ سب نے دیکھا کہ معصوم بچی کس طرح معاشرتی وحشت کا نشانہ بنی،بچوں کے ساتھ زیادتی کے واقعات کو روکا جا سکے۔ سکولوں میں بچوں کی پٹائی کیخلاف بل لایا جا رہا ہے۔ آپ نے بھی دیکھا ہوگا کہ دیہاتی علاقوں میں استاد کا ایک تھپڑ ہی اس عمر میں کان کے پردے پھاڑ دیا کرتا تھا، لہذا پٹائی کے واقعات کو روکنے کا بل لایا جارہا ہے۔سکولوں میں بچوں کو مارنے کے واقعات کیخلاف استاد کیخلاف کریمنل کیس درج ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ اوگرا نے تیل کی قیمتیں 14روپے بڑھانے کی سفارش کی تھی۔وفاقی حکومت نے پٹرولیم مصنوعات میں قیمتوں میں اضافے کا فیصہ مئوخر کردیا ہے۔ وزیراعظم نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کا معاملہ ای سی سی کو بھجوا دیا ہے کہ دوباہ غور کیا جائے۔

 

متعلقہ خبریں