خود کو عوامی کہنے والے بلاول بھٹو کی اصلیت کا پول کھل گیا

2019 ,اپریل 15



لاڑکانہ(مانیٹرنگ ڈیسک) چئیرمین پاکستان پیپلز پار ٹی بلاول بھٹو زرداری کارکنان سے تحقیر آمیر رویے کی وڈیو منظرعام پر آ گئی۔ پیپلز پارٹی کے بزرگ کارکن نے بلاول بھٹو سے ہاتھ ملانے کی کوشش کی تو انہوں نے بزرگ کارکن کو دھکے دے کر خود سے دور کر دیا۔بزرگ کارکن نے چئیرمین پاکستان پیپلز پار ٹی کو اجرک پہنائی تو انہوں نے حقارت سے اجرک اتار کر زمین پر پھینک دی۔وڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ بلاول نے بزرگ کارکن کو دھکے دیے اور پھر اجرک اتار کر پھینک دی۔ بلاول بھٹو جو خود کو ذولفقار علی بھٹو جا جانشین مانتے ہیں نے بھٹو کے سب سے بڑے وصف کو بھلاتے ہوئے کارکنان کی تذہیک شروع کر دی۔ ذولفقار علی بھٹو کے بارے میں کارکنان کو جو بات سب سے زیادہ پسند تھی وہ یہ تھی کہ سابق وزیراعظم ذولفقار علی بھٹوکبھی کسی جیلالے کو بھولتے نہیں تھے اور ہمیشہ خوش اخلاقی سے کارکنان کو ملتے تھے،ذولفقار علی بھٹو ورکرز کے ساتھ کہا جاتا ہے کہ ذولفقار علی بھٹو اپنے کارکنان کو ان کے ناموں سے جانتے تھے اور ان میں گھل مل جاتے تھے لیکن اب ان کے نواسے اور خود کو انکا جانشین سمجھنے والے بلاول بھٹو زرداری نے کارکنان کی تذہیک شروع کر دی ہے۔

متعلقہ خبریں