مغربی ملک میں طوفان کے بعد ریت کی پہاڑیاں ٹوٹ گئیں تو نیچے سے کیا نکلا؟

2018 ,دسمبر 18



لندن(مانیٹرنگ رپورٹ) برطانوی علاقے ایسیکس میں طوفان نے ریت اور مٹی کی پہاڑیوں کو توڑ ڈالا اور ان کے نیچے سے تاریخ کا ایسا خزانہ نکل آیا کہ پوری دنیا کے ماہرین وہاں پہنچ گئے۔ دی انڈیپنڈنٹ کے مطابق ان پہاڑیوں کے نیچے سے ڈائنوسارز کے پیروں کے نشانات دریافت ہوئے ہیں جو اس قدر بہترین حالت میں ہیں کہ اس سے پہلے کہیں ایسے واضح نشانات دریافت نہیں ہوئے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ یہ نشانات 10کروڑ سال کے لگ بھگ قدیم ہیں۔ان جگہوں پر ان زمانوں میں ممکنہ طور پر پانی کی گزرگاہ تھی اور کیچڑ وغیرہ ہوتا تھا جس سے ڈائنوسارز گزرتے تھے۔ اس کیچڑ کی چکنی مٹی میں ان کے پاﺅں کے نشانات بنے اور پھر اسی طرح محفوظ ہو گئے۔رپورٹ کے مطابق اس جگہ سے ڈائنوسارز کے پورے جسم کی باقیات بھی برآمد ہوئی ہیں۔

یونیورسٹی آف کیمبرج کے پی ایچ ڈی سٹوڈنٹ انتھونی شیلیٹو کا کہنا ہے کہ ”کسی جگہ سے ڈائنوسارز کے پیروں کے صحیح سلامت نشانات اور پورے جسم کی باقیات ملنا انتہائی نایاب واقعہ ہے۔عام طور پر ہمیں ان کے ڈھانچوں کے چھوٹے چھوٹے ٹکڑے ملتے ہیں جن سے ان کے متعلق زیادہ معلومات حاصل نہیں ہوتیں تاہم ان بڑے ٹکڑوں کو باہم جوڑنا اور ان سے ڈائنوسارز کے متعلق معلومات حاصل کرنا انتہائی آسان ہو گا اور ممکنہ طور پر اس سے تاریخ ایک نیا موڑ لے سکتی ہے۔“واضح رہے کہ برطانیہ کا یہ علاقہ ڈائنوسارز کی دریافت کے متعلق شہرت رکھتا ہے۔ 1825ءمیں تاریخ میں پہلی بار ڈائنوسارز کی باقیات یہیں سے دریافت ہوئی تھیں۔

متعلقہ خبریں