نوازشریف کی تضحیک کی جا رہی، رحم کی بھیک نہیں چاہیے،مریم نوازنے دل کی بھڑا س نکا ل لی

2019 ,فروری 7



لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان مسلم لیگ ن کی مرکزی رہنمائمریم نواز نے کہا ہے کہ نوازشریف کی تضحیک کی جارہی ہے،ہمیں رحم کی بھیک نہیں چاہیے، نواز شریف کو دل کی تکلیف ہے انہیں4 دن سروسز ہسپتال کیوں رکھا گیا؟ نواز شریف کی صحت بارے ابہام حکومتی کارندوں نے پیدا کیا۔ مسلم لیگ ن کی رہنماءاور نوازشریف کی صاحبزادی مریم نواز نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ایسے شخص کی صحت کے ساتھ کھلواڑ کیا جا رہا ہے جو تین بار وزیراعظم رہ چکا ہے۔نوازشریف کو ایک ہسپتال سے دوسرے اسپتال لے جایا جا رہا ہے۔ مریم نواز نے کہا کہ نوازشریف کی تضحیک کی جارہی ہے۔ لیکن ہمیں رحم کی بھیک نہیں چاہیے۔ چار دن سے نوازشریف کوسروسزہسپتال میں رکھا ہے جہاں کارڈیک یونٹ ہی نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ نواز شریف کی صحت کے معاملے پر ابہام حکومتی کارندوں نے پیدا کیا۔ چاروں بورڈز نے کہا کہ نواز شریف کو دل کے ہسپتال جانا چاہیے۔لیکن اس کے باوجود نواز شریف کو 4 دن سروسز ہسپتال کیوں رکھا گیا؟ انہوں نے کہا کہ میڈیکل بورڈ 5 روز کیا کرتا رہا ہے؟ میاں صاحب کو جیل سے لے کر یہ خود آئے تھے۔ اور پھر میڈیکل بورڈ بنا کر میاں صاحب کی صحت کے معاملے پرتضحیک کی گئی۔ بتایا گیا ہے کہ سابق وزیراعظم نوازشریف کی خواہش پرانہیں ہسپتال سے جیل منتقل کرنے کی اجازت مل گئی ہے۔ ڈاکٹرز نے نوازشریف کو جیل منتقل کرنے کی اجازت دے دی ہے۔جس پر نوازشریف کو جیل منقتل کردیا گیا ہے۔ دوسری جانب سابق وزیراعظم نوازشریف نے پارٹی رہنماو¿ں اور کارکنان سے ملاقات کرنے سے معذرت کرلی ہے۔ بتایا گیا ہے کہ سابق وزیراعظم نوازشریف کا کہنا ہے کہ وہ آج صرف اپنے خاندان کے افراد سے ملاقات کریں گے۔ نوازشریف کی والدہ بیگم شمیم اختر، مریم نوازاور ان کی صاحبزادی ماہ نورصفدر ہسپتال پہنچ گئی ہیں، ملاقات میں شریف فیملی کے دیگر افراد بھی شامل ہیں۔ نوازشریف کی معذرت کے بعد ن لیگ کے سینئر رہنمائ بھی ملاقات کیے بغیر ہی واپس چلے گئے۔

متعلقہ خبریں