بلاول بھٹو تیاری کر لو ۔۔۔ اب تمہارے ساتھ کیا ہونے والا ہے؟ حکومت نے جیالوں کی چیخیں نکلوا دینے والا اعلان کر دیا

2019 ,مئی 29



کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان تحریک انصاف نے آبی بحران کے حوالے سے پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کے خلاف تحریک چلانے کا اعلان کر تے ہوئے کہا ہے کہ پانی دینا حکومت سندھ کی ذمہ داری ہے ۔ ایم پی ایز بھی کہتے ہیں کہ ہمارے حلقے میں پانی نہیں ہے ۔ پی ٹی آئی کے رہنما، سندھ اسمبلی میں اپوزیشن فردوس شمیم نقوی اور پی ٹی آئی کراچی کے صدر خرم شیرزمان کی قیادت میں کراچی سے منتخب پی ٹی آئی ارکان سندھ اسمبلی نے آبی قلت کے خلاف پیر کو کراچی واٹر اینڈر سیوریج بورڈ کے دفتر کے باہر مظاہرہ کیا۔ مظاہرے میں حکومت سندھ اور واٹر بورڈ حکام کے خلاف شدید نعرے بازی کی گئی۔ احتجاج کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے فردوس شمیم نقوی کا کہنا تھا کہ سعید غنی گناہوں سے تائب ہوں، پیسے نکالیں اور لائنیں درست کرائیں۔ نا اہل سندھ حکومت نے گیارہ سال سے کراچی کے پانی پر قبضہ جمایا ہوا ہے ۔ سندھ کے وزیر بلدیات امیر اور کراچی کے شہری غریب ہوتے جا رہے ہیں۔ حب ڈیم میں پانی نہیں تھا تو ضلع غربی کو پانی نہیں ملتا تھا۔ اب حب ڈیم بھر چکا ہے پھر بھی پانی نہیں مل رہا۔ فردوس شمیم نے کہا کہ پانی کا مسئلہ حل نہیں کیا جائے گا تو حکومت بھی نہیں کرنے دیں گے ۔ پی ٹی آئی کے رکن سندھ اسمبلی خرم شیر زمان نے کہا کہ پیپلز پارٹی کے فور منصوبہ مکمل نہیں کرے گی۔ پی پی پی نے شہر کو تباہ کردیا۔ انہوں نے ایم ڈی واٹر بورڈ کو تبدیل کرنے اور سندھ کے وزیر بلدیات سعید غنی کو برطرف کرنے کا مطالبہ کیا۔ خرم شیرزمان کا کہنا تھا کہ واٹر بورڈ میں اربوں کی کرپشن ہے ۔ سعید غنی کے محکمے کا بھی آڈٹ کرایا جائے ۔ حالات بہتر نہ ہوئے تو پہلا احتجاج سعید غنی کے دفتر کے باہر ہوگا اور آخری احتجاج بلاول بھٹو زرداری کے گھر کے باہر۔ احتجاج میں بلال غفار، ڈاکٹر سنجے ، سدرہ عمران، ڈاکٹر سیما ضیائ، شہزاد قریشی، سعید آفریدی، عمر عماری، علی عزیز، ریاض حیدر، جمال صدیقی، شاہ نواز جدون، کریم بخش گبول، شبیر قریشی، عدیل احمد اور عباس جعفری نے شرکت کی۔

متعلقہ خبریں