نوازشریف جیل واپس چلا گیا تو ہم کیا کریں ؟ تازہ تازہ ن لیگ کی اتحادی بننے والی پیپلز پارٹی نے لیگیوں کو بڑا دھچکہ دے دیا

2019 ,مئی 7



ملتان(مانیٹرنگ ڈیسک) سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی نے کہا ہے کہ نواز شریف کو جیل بھیجنے کا فیصلہ عدالت کا ہے جس میں ہم مداخلت نہیں کر سکتے۔ملتان میں میڈیا سے گفتگو میں یوسف رضا گیلانی کا کہنا تھا کہ پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں بڑھنے کا اثر پورے ملک میں ہے۔ مہنگائی سے لوگ تنگ آ چکے ہیں۔ ہماری پارٹی اور اپوزیشن اس پر حکمت عملی بنا رہی ہے۔یوسف رضا گیلانی نے کہا کہ ہم مہنگائی کو کسی صورت قبول نہیں کریں گے۔ پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کی چیئرمین شپ پر جب ن لیگ بات کرے گی تو جواب دیں گے۔ حکومت کی حکمت عملی سے کوئی بھی مطمئن نہیں ہے۔ یاد رہے کہ خبر یہ تھی کہ سابق وزیر اعظم نواز شریف جاتی امرا سےکوٹ لکھپت جیل کے لئے روانہ ہوئے ، ، نواز شریف کےساتھ مریم نوازبھی گاڑی میں سوار تھیں ،نواز شریف کی گاڑی حمزہ شہباز چلا رہے تھے،ادھر کوٹ لکھپت جیل کا لاک اپ بندکردیا گیا ہے، جیل ذرائع نواز شریف کو اب جیل انتظامیہ وصول نہیں کرےگی، اسسٹنٹ سپرنٹڈنٹ جیل جاتی امرا میں لیٹر دی کر چلےگئے۔ جیل انتظامیہ کے مطابق اب محکمہ داخلہ پنجاب کےخصوصی احکامات کاانتظا رہے۔موصولہ اطلاعات کے مطابق کوٹ لکھپت جیل کےداخلی راستوں پر پولیس کا سخت پہرہ ہے، پولیس نےکوٹ لکھپت جیل کاداخلی راستہ مکمل طورپر بندکر دیا، امن وامان کی صورتحال برقرار رکھنےکے لئےجیل کےباہر جیمرز لگائےگئے ہیں۔خیال رہے کہ میاں نواز شریف نے مقررہ وقت میں خود کو جیل حکام کے حوالے نہیں کیا، جس کے بعد جیل پولیس سابق وزیر اعظم کی گرفتاری کے لئے رائیونڈ پہنچ گئی. جیل پولیس نواز شریف کےگھرسے باہر آنے کا انتظار کر تی رہی.کارکنوں کی بڑی تعداد جاتی امرا کے باہر موجود تھی، حالات کے پیش نظرسیکیورٹی سخت کردی گئی، بم ڈسپوزل اسکواڈ کا عملہ بھی موجود ہے۔ مسلم لیگ ن کے قائد سے اظہار یک جہتی کے لئے پارٹی رہنما اور کارکنوں کی جاتی امرا آمد جاری ہے.

متعلقہ خبریں