رات گئے نواز شریف کو کمر توڑ جھٹکا ، عدالت سے ایسی خبر آگئی کہ پوری ن لیگ افسردہ ہوگئی

2019 ,اپریل 29



اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) اسلام آباد ہائی کورٹ میں ججز کی مصروفیات کے باعث نواز شریف کی بریت کیخلاف نیب کی اپیل پر سماعت نہیں ہو سکی۔ اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس عامر فاروق اور جسٹس محسن اختر کیانی نے فلیگ شپ ریفرنس میں نواز شریف کی بریت کے خلاف نیب کی اپیل پر سماعت کرنا تھی۔ تاہم کیس کی سماعت بغیر کارروائی کے اکیس مئی تک ملتوی کر دی گئی۔ نیب نے فلیگ شپ ریفرنس میں نواز شریف کی بریت اسلام آباد ہائیکورٹ میں چیلنج کر رکھی ہے۔ جبکہ دوسری جانب پشاور کی احتساب عدالت نے آمدن سے زائد اثاثوں کے کیس میں عاصمہ عالمگیر کو عمرہ پر جانے کی اجازت دیتے ہوئے کیس کی سماعت 27 مئی تک ملتوی کر دی۔ سابق وفاقی وزیر ارباب عالمگیر اور ان کی اہلیہ عاصمہ عالمگیر پشاور کی احتساب عدالت میں پیش ہوئیں۔ عدالت میں استغاثہ کے دو گواہوں کے بیانات ریکارڈ کئے گئے۔ اگلی سماعت پر مزید گواہوں کے بیانات ریکارڈ کئے جائیں گے۔ عدالت نے کیس کی سماعت ستائیس مئی تک ملتوی کر دی ہے۔ احتساب عدالت کے باہر میڈیا سے گفتگو میں عاصمہ عالمگیر کا کہنا تھا کہ عدالت کا شکریہ ادا کرتی ہوں، پاکستان میں آزاد عدالتیں موجود ہیں۔ ہائیکورٹ نے میرا نام ای سی ایل سے نکال دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہماری دو سو سال پرانی جائیداد کی باتیں ہو رہی ہے۔ ہیلی کاپٹر کا کیس کہاں گیا؟ کیا وزیراعظم اس ملک کے شہری نہیں ہیں۔ چار سال قبل نیب کو اپنی جائیداد کا تمام ریکارڈ فراہم کیا ہے۔

متعلقہ خبریں