ایپل دنیا کی پہلی ایک ٹریلین ڈالر کمپنی بن گئی

2018 ,اگست 4



کیلی فورنیا(مانیٹرنگ ڈیسک) : مشہور آئی فونز بنانے والی کمپنی ایپل پہلی امریکی کمپنی بن گئی ،جس کی مالیت ایک  ٹریلین ڈالر تک جا پہنچی جبکہ دوسرے نمبر پرایمیزون ہے اور مائیکرو سافٹ چوتھے نمبر پر آگئی ۔آئی فون بنانے والی کمپنی ایپل نے سیلیکون ویلی میں اپنی حریف کمپنیاں جیسے ایمیزون، مائیکروسافٹ کو پیچھے چھوڑ دیا، نیویارک اسٹاک مارکیٹ میں مالیت دس کھرب ڈالر ہوگئی جبکہ اپیل کے شیئرز کی قیمت 207 ڈالر سے تجاوز کر گئی۔جس کے بعد اپیل نے دنیا کی پہلے ایک ٹریلین ڈالر کمپنی کا اعزاز اپنے نام کرلیا۔

دوہزارسات میں آئی فون کی رونمائی کے بعد سے ایپل کمپنی کے شئیرز میں گیارہ سو فیصد کا اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔یاد رہے کہ گذشتہ برس اپیل کو 229 ارب ڈالر کا منافع ہوا تھا، جس کے بعد یہ سب سے زیادہ منافع والی پبلک کمپنی بن گئی تھی۔

خیال رہے ایپل کمپنی قائم ہونے کے بعد  اس اعزاز کو حاصل کرنے میں 42 سال لگے ،  اس کا مطلب کہ ایپل کی اسٹاک مارکیٹ کی قیمت برطانوی معیشت سے تین گنا زیادہ جبکہ ا ترکی اور سوئٹزرلینڈ کی معیشتوں سے کہیں زیادہ ہے۔دوسرےنمبر پر ایمیزون ہے، جس کی مالیت آٹھ سو تیرانوے ارب ڈالر ہے، آٹھ سو سڑسٹھ ارب ڈالر مالیت کے ساتھ ایلفابیٹ کمپنی تیسرے نمبر پر ہے۔چوتھا نمبر مائیکرو سافٹ کا ہے، جس کی مالیت آٹھ سو پچیس ارب ڈالر ہے اور فیس بک کی مالیت پانچ سو سات ارب ڈالر ہے۔

متعلقہ خبریں