وہی ہوا جس کا ڈرتھا: سعودی حکومت نےعمرہ کرنے کے خواہشمند پاکستانیوں کوناقابل یقین دھچکہ دے دیا

2019 ,مارچ 23



ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی حکومت نے رمضان المبارک سے قبل ہی عمرہ زائرین کی انٹری کی معیاد 15 روز کردی ہے، سعودی حکومت کی جانب سے ویزا کی انٹری کی معیاد کم کرنے کرنے پر زائرین کو شدید مشکلات کا سامنا ہے جبکہ لاہور سے جدہ جانے والی پروازوں پر قومی ائیر لائن سمیت نجی ائیر لائنز کی ٹکٹیں نہ ملنے پر بھی عمرہ زائرین پریشانی میں مبتلا ہیں کیونکہ عمرہ زائرین کے رش کی وجہ سے ائیر لائنز کی ٹکٹوں میں اضافہ ہونے کے علاوہ سیٹوں کی ایڈوانس بکنگ ہوچکی ہے، یاد رہے کہ اس سے قبل یہ بھی خبر آئی تھی کہ سعودی حکام نے کسی بھی قسم کے ویزے کے حصول کے لیے میڈیکل انشورنس کو ضروری قرار دے دیا، سعودی ذرائع ابلاغ کے مطابق سعودی حکام بالا کے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ سعودی عرب کے ویزے کے حصول کے لیے میڈیکل انشورنس کو ضروری قرار دیا گیا ہے، رپورٹ کے مطابق حج اور علاج کی غرض سے آمد کے علاوہ تمام قسم کے ویزوں کے حصول کے لیے میڈیکل انشورنس کو لازمی قرار دے دیا گیا ہے تاہم سفارتی پاسپورٹ کے حامل افراد اس سے مستثنیٰ ہوں گے، نئے فیصلے پر عمل درآمد تین ماہ کے بعد ہوگا، اس فیصلے کا مقصد سعودی عرب میں دوران قیام بیمار ہونے کی صورت میں مذکورہ شخص کے علاج کو ممکن بنانا ہے، واضح رہے کہ چند روز قبل سعودی حکومت نے پاکستانیوں کے لیے ویزا فیس میں کمی کا اعلان کیا تھا، پاکستانیوں کے لیے فیسوں میں کمی کا اطلاق 15 فروری سے کیا گیا تھا، پاکستانی شہری پہلے سنگل انٹری کے لیے 2 ہزار ریال اور ملٹی پل انٹری کے لیے 3 ہزار ریال روپے ادا کرتے تھے۔ پاکستانی شہری اب 2 ہزار ریال کی بجائے محض 338 ریال کی رقم ادا کرکے سعودی عرب کا ویزا باآسانی حاصل کرسکیں گے۔

متعلقہ خبریں