تبدیلی سرکارکی بڑی تبدیلیاں : ملکی تاریخ میں پہلی بار ہمارادفاعی بجٹ بھی خطرے میں ۔۔۔ انکشاف نے ہلچل مچا دی

2019 ,مئی 6



اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) نون لیگ کے مرکزی رہنماؤں نے کہا ہے کہ مہنگائی حکومت کو لے ڈوبے گی، ملکی معیشت کیلئے کرائے پر لوگ لائے جارہے ہیں، ہمارا دفاعی بجٹ بھی خطرے میں پڑسکتا ہے۔یہ بات انہوں نے قومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران اظہار خیال کرتے ہوئے کہی۔ اسپیکر قومی اسمبلی کی اسد قیصر کی زیر صدارت اجلاس میں مہنگائی کے خلاف اپوزیشن ارکان حکومت پر برس پڑے۔خواجہ آصف نے کہا کہ ہوشربا مہنگائی موجودہ حکومت کو لے ڈوبے گی ملکی معیشت کیلئے کرائے پر لوگ لائے جارہے ہیں۔راجہ پرویز اشرف نے کا کہنا تھا کہ حکومت عوام پر مہنگائی بم گرا رہی ہے، کسی کے دور حکومت میں اتنی مہنگائی نہیں ہوئی جو اس بار ہوئی ہے۔احسن اقبال نے کہا کہ حکومت کی معاشی پالیسیاں ملکی سلامتی کیلئےخطرہ بن چکی ہیں، ہمارا دفاعی بجٹ بھی خطرے میں پڑسکتا ہے۔اس موقع پر وزیر مملکت حماد اظہر نے اپوزیشن اراکین کو کرارا جواب دیتے ہوئے کہا کہ ن لیگ اور پی پی دور کے پہلے آٹھ ماہ میں ہم سے زیادہ مہنگائی تھی، یہ دونوں جماعتیں اپنے دور حکومت میں اکیس بار آئی ایم ایف کے پاس گئیں۔حما داظہر نے مزید کہا کہ یہ لوگ پہلے کہتے تھے آئی ایم ایف کے پاس جاؤ لیکن اب پلے کارڈ اٹھا کر احتجاج کررہے ہیں۔ دوسری جانب یہ خبر ہے کہ سابق صدر آصف علی زرداری نے پی اے سی چیئرمین شپ کے لیے رانا تنویر کی حمایت کا عندیہ دے دیا.تفصیلات کے مطابق میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پاکستان پیپلز پارٹی کے شریک چیرمین نے کہا کہ رانا تنویر اچھے انسان ہیں، پی اے سی کی چیئرمین شپ پر مشاورت کریں گے۔اس سوال پر کہ کیا ن لیگ نے رانا تنویر کو پی اے سی کا چیئرمین نام زد کرنے سے قبل ان سے مشاورت کی، سابق صدر نے کہا کہ خورشید شاہ سے ضرور کی ہوگی، مجھ سے کیوں کریں گے۔

انھوں نے حکومتی اقدامات پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ لگتا ہے کہ آئی ایم ایف کا آفس پاکستان شفٹ ہورہا ہے.انھوں نے کہا کہ اگر آئی ایم ایف کے لوگ اسٹیٹ بینک میں بیٹھیں ہوں گے، تو پھر ملک کون چلا رہا ہوگا؟خیال رہے کہ آج پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے اپنے ایک بیان میں کہا تھا کہ آئی ایم ایف اگر ملک چلائے گا، تو وہ عوام نہیں اپنے مفاد کے لئے چلائے گا.بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ آئی ایم ایف غریب عوام، مزدوراور کسان کا خیال نہیں رکھے گا، قانون آئی ایم ایف کے تنخواہ دارکو سربراہ اسٹیٹ بینک بنانے کی اجازت نہیں دیتا، اور اب یہ خبر ہے کہ نون لیگ کے مرکزی رہنماؤں نے کہا ہے کہ مہنگائی حکومت کو لے ڈوبے گی، ملکی معیشت کیلئے کرائے پر لوگ لائے جارہے ہیں، ہمارا دفاعی بجٹ بھی خطرے میں پڑسکتا ہے۔یہ بات انہوں نے قومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران اظہار خیال کرتے ہوئے کہی۔ اسپیکر قومی اسمبلی کی اسد قیصر کی زیر صدارت اجلاس میں مہنگائی کے خلاف اپوزیشن ارکان حکومت پر برس پڑے۔خواجہ آصف نے کہا کہ ہوشربا مہنگائی موجودہ حکومت کو لے ڈوبے گی ملکی معیشت کیلئے کرائے پر لوگ لائے جارہے ہیں


متعلقہ خبریں