فواد چوہدری کا قمری کلینڈر کسی کام نہ آسکا۔۔۔ قوم کوعید کی تاریخ کیلئے کس پر انحصار کرنا ہوگا؟ ناقابل یقین خبر آگئی

2019 ,مئی 28



اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) اسلام آباد میں وزیراعظم عمران خان کی زیرِ صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس شروع ہو گیا ہے۔ وفاقی کابینہ کے اجلاس میں 8نکاتی ایجنڈے پر بحث ہو گی البتہ وزارتِ سائنس و ٹیکنالوجی کے بنائے ہوئے قمری کیلنڈر کو وفاقی کابینہ کے ایجنڈے میں شامل نہ کیا جاسکا۔ واضح رہے کہ وزیرِ سائنس و ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے قمری کیلنڈر کی سمری کل وفاقی کابینہ کو بھجوائی تھی لیکن آج اسے وفاقی کابینہ کے اجلاس کے ایجنڈے میں شامل نہ کیا گیا۔آج اگرفواد چوہدری کی قمری کیلنڈر کی سمری کو خصوصی طور پر زیرِ بحث لایا گیا تو اس کی منظوری ہو سکتی ہے لیکن اس کے امکانات نہیں ہیں۔ اگر آج سمری کی منظوری نہیں جاتی تو قوم کو عید کی تاریخ کے لیے رویتِ ہلال کمیٹی پر انحصار کرنا ہوگا اور قمری کیلنڈر کا معاملہ عید کے بعد زیرِغور آئے گا۔یاد رہے کہ وزیرِ سائنس و ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے عیدین اور رمضان کا چاند دیکھنے کے لیے رویتِ ہلال کمیٹی ختم کر کے قمری کیلنڈر لانے کا اعلان کیا تھا جس کے بعد وزارتِ سائنس اورسپارکو کے ماہرین نے مل کر قمری کیلنڈر تیار کر لیا ہے ۔وفاقی وزیرسائنس و ٹیکنالوجی نے یہ کیلنڈر اسلامی کونسل اور وفاقی کابینہ کو ارسال کیا تھا اور پیر کے روز اس قمری کیلنڈر کی ویب سائٹ کا افتتاح بھی کر دیا تھاتاہم اب وزیراعظم عمران خان کی زیرِ صدارت ہونے والے وفاقی کابینہ کا اجلاس میں وزارتِ سائنس و ٹیکنالوجی کے بنائے ہوئے قمری کیلنڈر کو ایجنڈے میں شامل نہ کیا جاسکا ہے جس کے بعد اب عید رویتِ ہلال کمیٹی کے فیصلے کے مطابق ہو گی جبکہ رویتِ ہلال کمیٹی پہلے ہی 4جون کو عید کا چاند دیکھنے کے لیے اجلاس بلا چکی ہے دوسری جانب فواد چوہسری نے بھی 5جون کو عید الفطر منائے جانے کا اعلان کر رکھا ہے۔

متعلقہ خبریں