انضمام الحق نے 3 سال کےدوران پی سی بی سے بطور چیف کتنی تنخواہ اور مراعات وصول کیں ؟ انکشاف آپ کے ہوش اڑا دے گا

2019 ,جولائی 18



کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک )انضمام الحق نے چیف سلیکٹر کے عہدے سے الگ ہونے کا اعلان کر دیا ہے تاہم اب معلومات سامنے آئی ہیں کہ انہوں نے اپنے تین سالہ دور میں پی سی بی سے اپنی خدمات کی چھ کروڑ روپے سے زائد کی رقم وصول کی ۔ انضمام الحق نے اپریل 2016 میں چیف سلیکٹر کی ذمہ داری سنبھالی، ورلڈ کپ کے پیش نظر ان کے معاہدے میں 3ماہ کی توسیع ہوئی، انھیں 12 لاکھ روپے ماہانہ تنخواہ کے ساتھ دیگر مراعات دی گئیں، معاہدے کے تحت انضمام کو ٹیم کی کسی سیریز میں فتح پر معاوضے کا 25 فیصد اور آئی سی سی ایونٹ جیتنے پر 100 فیصد حصہ ملتا تھا۔ چیمپئنز ٹرافی کی کامیابی پر انھیں حکومت سے بھی ایک کروڑ روپے کی انعامی رقم ملی تھی، یوں ایک محتاط اندازے کے مطابق تقریباً6 کروڑ روپے سے زائد ان کے اکاﺅنٹ میں منتقل ہوئے۔ انضمام پر سب سے زیادہ تنقید بھتیجے امام الحق کو دیگر کھلاڑیوں پر فوقیت دے کر قبل از وقت قومی ٹیم میں شامل کرنے پر ہوئی، بعد میں بھی ان پر الزام لگتے رہے کہ وہ امام کا کیریئر بنانے کیلئے مختلف جوڑتوڑ کرتے رہے۔ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق آئی سی سی کرکٹ ورلڈ کپ 2019ءمیں ناقص کارکردگی کے بعد بھارتی ٹیم سے متعلق خبریں سامنے آنے کا سلسلہ جاری ہے اور اب انکشاف ہوا ہے کہ بی سی سی آئی نے کپتان ویرات کوہلی کو اہم ترین فیصلوں میں مشاورت سے بھی محروم کر دیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق کپتان ویرات کوہلی کی قیادت میں بری کارکردگی دکھانے والی بھارتی کرکٹ ٹیم کیلئے نئے کوچ اور دیگر سٹاف کی بھرتیوں کیلئے بی سی سی آئی نے مطلوبہ افراد کی تلاش کیلئے اشتہارات جاری کر دئیے ہیں اور اب بھارتی خبر رساں ادارے ’انڈین ایکسپریس‘ نے انکشاف کیا ہے کہ کپتان کوہلی کو کوچ کے انتخابی عمل سے یکسر علیحدہ کردیا گیا ہے جس کے معنی یہ ہوں گے کہ اس مرتبہ ان کی پسند اور نا پسند کا خیال نہیں رکھا جائے گا۔

متعلقہ خبریں