بریکنگ نیوز : کلبھوشن یادیو کو رہا کردیا گیا ، اب وہ کہاں اور کس حال میں ہے؟ رات گئے حکومت کے اعلان نے پورے ملک میں تہلکہ مچا دیا

2019 ,فروری 6



اسلام آبا د( مانیٹرنگ ڈیسک) وفاقی وزیر اور پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی رہنماء علی امین گنڈا پور نے انکشاف کیا ہے کہ مسلم لیگ ن کے دور حکومت کو کلبھوشن یادیو کو ملک سے نکال دیا تھا ، کلبھوشن یادیو کو جو محفوظ راستہ دیا گیا ہے (ن) لیگ کی جانب سے وہ خود بتا دے گا۔ نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں ن لیگی رہنماء و سابق گورنر سندھ زبیر عمر، پیپلز پارٹی کے رہنماء ناصر حسین شاہ اور پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے علی امین گنڈا پور شریک تھے ، پروگرام کی میزبانی سینئر صحافی وسیم بادامی کر رہے تھے ۔ لیکن جیسے ہی علی امین گنڈا پور کی جانب سے یہ انکشاف کیا گیا کہ کلبھوشن یادیو کو نواز شریف کی حکومت میں ملک سے نکالا جا چکا ہے تو سارے ہی ورطہ حیرت میں ڈوب گئے۔ علی امین گنڈا پور کا دوران پروگرام کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن کے دور حکومت کو کلبھوشن یادیو کو ملک سے نکال دیا تھا ، کلبھوشن یادیو کو جو محفوظ راستہ دیا گیا ہے (ن) لیگ کی جانب سے وہ خود بتا دے گا جس پر وسیم بادامی کی جانب سے یہ سوال داغا گیا کہ کلبھوشن یادیو تو پاکستان آرمی کی حراست میں ہے اور اس کا مقدمہ بھی زیر سماعت ہے تو پھر آپ یہ کیسے کہہ سکتے ہیں؟ جس پر علی امین گنڈا پور نے یہ کہہ دیا کہ مقدمہ چل رہا ہے تو وہ بتائے گا نہ سب کچھ ، جس پر زبیر عمر نے کہا کہ ابھی تو آپ یہ کہہ رہے تھے کہ اس کو بھیج دیا گیا ہے، وہ ملک سے باہر چلا گیا ہے، جس پر علی امین گنڈا پور نے زبیر عمر کو جواب دیا کہ آپ لوگوں نے پوری کوشش کی ہے اُسے بچانے کی ، جس پر زبیر عمر نے انہیں کہا کہ یار آپ بات پر تو اسٹینڈ کریں نا، بقول آپ کے وہ ملک سے باہر چلا گیا ہے تو اپنی پوزیشن کو کلیئر کریں کیونکہ یہ تو اتنی بڑ بریکنگ نیوز ہے کہ وزیر اعظم عمران خان کو نیند سے بیدار کر کے یہ بتایا جائے گا کلبھوشن کو ملک سے باہر بھیج دیا گیا ہے،

متعلقہ خبریں