عمران خان نے آج سوہاوہ میں جہاں یونیورسٹی کا سنگ بنیاد رکھا بالکل اسی مقام پر 70 سالوں سے کیا کام ہوتا رہا ہے؟ جان کر آپ سبحان اللہ کہہ اٹھیں گے

2019 ,مئی 5



راولپنڈی (مانیٹرنگ ڈیسک) وزیراعظم عمران خان نے بتا یا ہے کہ سوہاوہ کو ترقی کا پہا ڑ بھی کہا جاتا ہے ،یہاں ستر سال پہلے بابا نور الدین نے چلا کا ٹا تھا جو کہ بہت بڑے روحانی بزرگ تھے ۔القادر یونیورسٹی کا سنگ بنیاد رکھنے سے متعلق تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہ القادریہ یونیورسٹی روحانیت کے سپہ سالار عبد القادری جیلانی کے نام پر رکھی گئی ہے ۔عبد القادری جیلانی پر اللہ نے بڑے کرم کیے تھے ،انہوں نے پہلی مرتبہ سائنس ،روحانیت اور اسلام کا تعلق جوڑا تھا۔عمران خان نے کہا کہ یہ بات بہت کم لوگوں کو پتہ ہے ،عبد القادر جیلانی نے سائنس اور روحانیت پر تحقیقات شروع کرائی تھیں اور انہوں نے انسانوں کو بتا یا تھا کہ اللہ سب کچھ کر سکتا ہے ۔وزیراظعم نے کہا جب انسان میں یہ ایمان آجاتا ہے تو انسان کو خوف سے آزاد کر دیتا ہے ،انسان کو ادھر پہنچا دیتا ہے کہ جہاں اسے کچھ نا ممکن نہیں لگتا ۔ان کا کہنا تھا کہ بڑے بڑے صوفی آئے ،داتا گنج بخش بابا فرید ،بلے شاہ ،میا میر اورنظام الدین اولیا نے اسلام کے پیغام کے ساتھ لوگوں کے دل جیتے لیکن ان بزرگان دین پر کوئی ریسرچ نہیں ۔القادر یونیورسٹی میں ان بزرگوں پر ریسرچ ہو گی ، دوسری جانب یہ خبر ہے کہ سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے کہا کہ کے قبائلی علاقوں میں بہت جلد ترقی کا نیا دور شروع ہونے والا ہے ،فاٹا سے تعلق رکھنے والے بے روزگار گریجوایٹ کو 10سے 15ہزار وظیفہ دینے کا جلد اعلان کیا جائے گا، نوجوانوں کو روزگار فراہم کرنا حکومت کی اولین ترجیح ہے اور اس کے حصول کے لیے 5لاکھ سے ڈیڑھ کروڑتک نوجوانوں کو آسان شرائط پر قرضے فراہم کیے جائیں گے۔ اسپیکر قومی اسمبلی نے کہا کہ نوجوان اس ملک کاقیمتی اثاثہ ہیں اورہمیں ان کے روشن مستقبل کے لیے روزگار کے مواقع فراہم کرنا ہونگے

متعلقہ خبریں