امریکا نے پاکستانیوں کے لیے ویزا میعاد صرف ایک سال کردی

2019 ,مارچ 7



اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک):  پاکستان میں موجود امریکی افراد کے لیے نئی ویزا تبدیلیوں کے جواب میں امریکا نے پاکستانی شہریوں کے لیے 5 سال کا ملٹی پل  ویزا ختم کرنے کا اعلان کرتے ہوئے اسے 12 ماہ تک محدود کردیا، ساتھ ہی صحافی اور میڈیا کارکنوں کو امریکا میں رہتے ہوئے ہر تین ماہ بعد وہاں ٹھہرنے کے اجازت نامے کی تجدید بھی کرانا ہوگی۔ اس بات کا اعلان  اسلام آباد میں امریکی سفارت خانے نے ایک بیان میں کیا۔ اس کے ساتھ امریکا نے ایچ  ویزا (امریکا میں کام کرنے کے عارضی)، آئی ویزا (صحافیوں اور میڈیا اراکین )، ایل ویزا (کمپنیوں کے مابین تبادلےکا) اور آر ویزا ( مذہبی کارکنوں کے لیے) کی مد میں اضافی فیس بھی رکھی ہے تاہم وہ ویزا ملنے سے مشروط ہے۔ آئی ویزا کے لیے اضافی فیس 32 ڈالراور بقیہ دیگر ویزا کے لیے 38 ڈالر کی رقم رکھی گئی جو ویزا کے اجرا کے وقت اسلام آباد اور کراچی کے دفاتر میں سفارت خانے میں ادا کرنا ہوگی۔ امریکی اسٹیٹ ڈپارٹمنٹ کے مطابق یہ فیصلہ اس لیے کیا گیا ہے کہ ’ پاکستان نے ایک جانب تو اپنے مختلف ویزا زمروں کو نرم نہیں کرسکا اور دوم امریکی قانون کے تحت 21 جنوری سے پاکستانی ویزا زمروں کی مطابقت کے لحاظ سے یہ قدم اٹھایا گیا ہے۔ اسٹیٹ ڈپارٹمنٹ نے یہ بھی کہا ہے کہ حال ہی میں امریکی ویزا پالیسی اور دیگر ممالک کی ویزا پالیسیوں کا تفصیلی موازنہ کیا گیا ہے جس کے بعد امریکا کی  پاکستان سمیت دیگر کئی ممالک کی ویزا پالیسیوں کے درمیان عدم توازن اور فرق نوٹ کیا گیا۔ یہی وجہ ہے کہ پاکستان کے بارے میں اس کا جائزہ لیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ سال 2018ء میں امریکی اسٹیٹ ڈپارٹمنٹ نے پاکستانی سے 37 ہزار ویزا درخواستوں کو رد کردیا تھا جس کی وجہ ٹرمپ انتظامیہ کے نئے اقدامات کو قرار دیا گیا تھا۔

متعلقہ خبریں