لومیرج کرنے والی لڑکی نے عدالت میں سب کا پول کھول کر رکھ دیا

2019 ,جنوری 5



لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) جوڈیشل مجسٹریٹ نے پسند کی شادی کرنے والی لڑکی کو شوہر کے ساتھ جانے کی اجازت دیتے ہوئے پولیس کو انہیں ہراساں کرنے سے روک دیا۔ ماڈل ٹاؤن کچہری میں جوڈیشل مجسٹریٹ جویریہ منیر بھٹی کی عدالت نے 18سالہ آمنہ کو عدالت میں ریکارڈ کروائے گئے بیان کی روشنی میں اسکے شوہر یوسف کے ساتھ جانے کی اجازت دی۔ لڑکی نے اپنے بیان میں کہا کہ وہ 3 سال سے یوسف کے ساتھ پیار کرتی ہے، اس نے شوہر یوسف کے ساتھ پسند کی شادی کی ہے اور اسے اغواء نہیں کیا گیا تھا۔ آمنہ کے بیان کے مطابق اس کے گھر والے انہیں سنگین نتائج کی دھمکیاں دے رہے ہیں۔ لڑکی نے عدالت سے استدعا کی کہ عدالت انہیں ایک ساتھ زندگی گزارنے اور تحفظ دینے کا حکم جاری کرے۔ عدالت نے دلائل سننے کے بعد پریمی جوڑے کو ایک ساتھ جانے کی اجازت دے دی اور تھانہ ستوکتلہ پولیس کو حکم جاری کیا کہ جوڑے کو ہراساں نہ کیا جائے بلکہ انہیں تحفظ فراہم کیا جائے۔

متعلقہ خبریں