ڈیم فنڈ کے پیسوں کا کچھ پتہ نہیں ۔۔۔ ہم کچھ نہیں جانتے، حکومت نے ایسا نا قابل یقین اعلان کر دیا کہ پورا ملک ہکا بکا رہ گیا

2019 ,اپریل 13



کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) وفاقی وزیر آبی وسائل فیصل واوڈا نے انکشاف کیا ہے کہ سابق چیف جسٹس ثاقب نثار کے ڈیم چندہ مہم پر حکومت کا کوئی چیک اینڈ بیلنس نہیں ہے۔جیو نیوز کے پروگرام میں گفتگو میں فیصل واوڈا نے کہا کہ شہری اس لئے ڈیم فنڈ میں نقد عطیات نہ دیں۔ انہوں نے اپیل کی کہ شہری ڈیم فنڈ میں جو بھی عطیات دیں وہ کراس چیک یا بینک ٹو بینک ٹرانزیکشنز سے دیں، وفاقی وزیر دوران پروگرام نوکریوں سے متعلق اپنے بیان پر ڈٹ گئے اور کہا کہ ملک میں نوکریاں ہی نوکریاں ہوں گی، ان کا کہنا تھا کہ 28 ہزار تو اس سال تک صرف ان کی وزرات میں ہوں گی، 5 سے10 ہفتوں میں سب سامنے آجائے گا۔فیصل واوڈا نے یہ بھی کہا کہ ان کی زبان پھسلی تھی نہ انہوں نے کچھ بڑھا چڑھا کر کہا تھا۔وفاقی وزیر نے کہا کہ گیس آرہی ہے، گاڑیوں اور مشروبات کے پلانٹ لگ رہے ہیں، ایئر لائنز آرہی ہیں، نوکریاں ہی نوکریاں ہوں گی۔فیصل واوڈا کا تفصیلی انٹرویو آج رات 10 بج کر 5 منٹ پر صرف جیو نیوز سے نشر کیا جائے گا، دوسری جانب خبر یہ ہے کہ پنجاب کے وزیر ہاؤسنگ میاں محمود الرشید کہتے ہیں کہ احتساب چھوڑ کر گورننس پر نہیں لگ سکتے، احتساب کا مینڈیٹ ملا ہے، اسے چھوڑ دیں تو انصاف نہیں ہوگا۔ پی ٹی آئی رہنماء نے مختلف محکموں میں کرپشن تلاش کرنے کا دعویٰ بھی کیا، کہتے ہیں منصوبوں میں بڑی 2 نمبریاں سامنے آئی ہیں۔ انہوں نے ترجمان وزیراعلیٰ شہباز گل کے انسپکشن کے نوٹیفکیشن کو بھی خلاف ضابطہ قرار دے دیا۔وزیر ہاؤسنگ و پبلک ہیلتھ انجینئرنگ پنجاب میاں محمود الرشید نے کہا کہ احتساب کو چھوڑ کر گورننس پر نہیں لگ سکتے، اب فیصل واوڈا نے کہا ہے کہ شہری ڈیم فنڈ میں جو بھی عطیات دیں وہ کراس چیک یا بینک ٹو بینک ٹرانزیکشنز سے دیں۔

متعلقہ خبریں