’’ اب پاکستان میں یہ چیز ہم تیار کریں گے ‘‘ مہاتیر محمد نے شاندار اعلان کر دیا ، پاکستانیوں کو خوشخبری سُنا دی

2019 ,مارچ 22



اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) ملائیشیاء نے پاکستان میں گاڑیوں کا پلانٹ لگانے کا اعلان کردیا، پاکستان میں پروٹون کار انڈسٹری لگائی جائے گی، ملائیشین وزیراعظم نے کہا کہ ملائیشیاء نے غربت سے نکلنے کیلئے جاپان اور کوریا سے سبق حاصل کیا، سرمایہ کاری کے لیےامن واستحکام بہت ضروری ہے۔ روزگار فراہم کرنے کا بہترین ذریعہ صنعتیں ہیں۔وہ آج یہاں وزیراعظم عمران خان کے ہمراہ سرمایہ کاری کانفرنس سے خطاب کررہے تھے۔ ملائیشین وزیراعظم مہاتیر محمد نے کہا کہ سرمایہ کاری کانفرنس کے انعقاد پر شکر گزار ہیں۔اس طرح کی کانفرنسز دوسروں کے خیالات کو سمجھنے کا موقع دیتی ہیں۔انہوں نے کہا کہ آزادی کے وقت ملائیشیاء ایک بہت غریب ملک تھا۔ ہم نے کورین اور جاپانی لوگوں سے سبق سیکھا اور پھر ترقی کی منصوبہ بندی کی۔انہوں نے کہا کہ ملائیشیاء میں غربت کا خاتمہ صنعتوں کے قیام سے ہوا۔ ہمیں دونوں ممالک کی سرمایہ کاری کوبڑھانا ہوگا۔ ملائیشیاء تمام ممالک کے ساتھ بھی صرف تجارت چاہتے ہیں۔ ملائیشیاء میں بیرونی سرمایہ کاری لیکر آئے ۔ سرمایہ کاری کے لیےامن واستحکام بہت ضروری ہے۔ روزگار فراہم کرنے کا بہترین ذریعہ صنعتیں ہیں، زراعت کے شعبے سے ہم ایک فیصد،جبکہ ایک فیکٹری پانچ سولوگوں کو روزگار فراہم کررہی ہے۔صنعتیں ہوں گی تولوگوں کو روزگار ملے گا۔ انہوں نے پاکستان میں پروٹون کار انڈسٹری لگانے کا اعلان کردیا ہے۔ انہوں نے وزیراعظم عمران خان کو ملائیشاء کی انڈسٹری کی بنی ہوئی کار بھی گفٹ کی۔ ہم نے غیرملکی سرمایہ کاروں کو اپنے ملک میں سرمایہ کاری کے مواقع فراہم کیے۔تاجروں کے درمیان اشتراک کے مواقع پیدا کرنا بہت ضروری کام ہے۔ انہوں نے کہا کہ کسی بھی ملک کی ترقی کیلئے امن اور استحکام کا کلیدی کردار ہوتا ہے۔امن اور استحکام ہوگا تو سرمایہ کاری بھی آتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ سڑکیں ، ریلوے، واٹرسپلائی، بجلی کے نظام کیلئے بھی کوئی منصوبہ بندی ہونی چاہیے۔ امیر لوگوں کو چاہیے ٹیکس ادا کریں تاکہ ان کے پیسے سے ہم انفراسٹرکچر کے شعبے میں بہتری لا سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے سب ممالک کے ساتھ اچھے تعلقات ہیں۔ لیکن ہمارا اسرائیل سے بڑا کوئی دشمن نہیں ہے۔اسرائیل سے ہم نے کسی قسم کا کوئی تعلق نہیں رکھا۔ اسرائیل کے ساتھ ہم نے کسی قسم کا کوئی تعلق نہیں رکھا ہوا ہے۔ اس موقع پروزیراعظم پاکستان عمران خان نے کہا کہ مہاتیر کو پاکستان میں خوش آمدید کہتے ہیں۔ مہاتیر کا دورہ پاکستان قابل فخر ہے۔ کل قوم دن یوم پاکستان ہے۔ ہر پاکستانی مہاتیر کے قائدانہ کردار کی تعریف کررہا ہے۔انہوں نے کہا کہ لیڈر وہ ہوتا ہے جس کے پاس آئیڈیالوجی ہو، اور مشکل وقت میں کھڑا ہوسکے۔مہاتیر نے ملائیشیاء کو تبدیل کرکے رکھ دیا ہے۔ مسلم ممالک میں ایک ماڈل ملک ہے جس نے اپنے وسائل سے ترقی کی ہے۔وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ مہاتیر یوم پاکستان کی تقریب میں شرکت کریں گے۔ یہ وہ دن ہے جب 1940ء میں قرارداد پاکستان منظور کی گئی تھی۔اس وقت پاکستان کے عظیم لیڈر قائداعظم نے پاکستان کی بنیاد رکھی۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں یہ ایسا وقت ہے جب وسیع سرمایہ کاری کے مواقع موجود ہیں۔ اس موقع پردونوں ممالک کے درمیان تجارت بڑھانے کیلئے کمیٹی بنا رہے ہیں۔پاکستان مستقبل کی ایک بہت بڑی مارکیٹ ہے۔ چین اور دوسرے ممالک کے ساتھ منسلک ہے۔انجینئرنگ ایند ٹیکنالوجی کی بنیاد پر سرمایہ کاری ملائیشیاء میں منتقل ہوئی۔ پاکستان مستقبل کی ایک بہت بڑی مارکیٹ ہے۔ چین اور دوسرے ممالک کے ساتھ منسلک ہے۔انجینئرنگ ایند ٹیکنالوجی کی بنیاد پر سرمایہ کاری ملائیشیاء میں منتقل ہوئی۔

متعلقہ خبریں