بھارت میں انتخابات ہوتے ہی پڑوسی ملک میں یکے بعددیگرے بم دھماکے ،متعدد ہلاکتوں میں اضافے کاخدشہ

2019 ,مئی 27



کھٹمنڈو(مانیٹرنگ ڈیسک) نیپال کے دارالحکومت کھٹمنڈو میں 3 بم دھماکوں کے نتیجے میں 4 افراد ہلاک اور 7 زخمی ہوگئے۔غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق نیپال کے دارالحکومت کھٹمنڈو میں 3 بم دھماکوں کے نتیجے میں 4 افراد ہلاک اور 7 زخمی ہوگئے، جس کے بعد ہلاکتوں مین اضافی کا خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے، پہلا دھماکا شہر کی حدود کے اندر ایک مکان میں ہوا، دوسرا دھماکا شہر کے نواح میں ایک دکان میں ہوا، جب کہ تیسرا دھماکہ اینٹوں کی بھٹیوں میں ہوا۔پولیس نے دھماکوں کی نوعیت اور دیگر تفصیلات کے بارے میں فی الحال مزید معلومات فراہم نہیں کیں اور نہ ہی ابھی تک کسی تنظیم نے دھماکوں کی ذمہ داری قبول کی ہے تاہم پولیس نے دھماکے میں ماؤ باغیوں کے ملوث ہونے کا شبہ ظاہر کیا ہے۔پولیس کے مطابق دھماکے کا نشانہ بننے والے ایک گھر سے ماؤ باغیوں کا پمفلٹ ملا ہے۔ پولیس ترجمان بشوا راج کا کہنا تھا کہ ‘معاملے کی تحقیقات جاری ہے اور علاقے میں سیکیورٹی کو بڑھادیا گیا ہے’۔ان کے مطابق دھماکے کے الزام میں مشتبہ 7 افراد کو حراست میں لیا گیا۔سانحہ ایسے وقت میں سامنے آیا جب ماؤ باغی گروہ نے گزشتہ ہفتے ہونے والے پولیس انکاؤنٹر پر ملک گیر ہڑتال کا اعلان کر رکھا تھا۔واضح رہے کہ نیپال میں دہائی تک خانہ جنگی رہی ہے تاہم 2006 میں امن معاہدہ کیا گیا تھا۔تاہم چند سابق جنگجوؤں نے اپنے رہنماؤں پر اصل انقلابی نظریے سے غداری کرنے کا الزام لگاتے ہوئے معاہدے کی خلاف ورزی جاری رکھی تھی۔ مقامی میڈیا کے مطابق ایک دکان میں ہونے والے زور دار دھماکے سے 3 افراد ہلاک اور 4 زخمی ہوئے جبکہ محض 4 کلومیٹر کے فاصلے پر ایک اور گھر میں ہونے والے دھماکے سے 1 شخص ہلاک اور ایک زخمی ہوا۔علاوہ ازیں کاٹھمنڈو کے نواحی علاقے میں موٹرسائیکل پر بم پھٹنے سے 2 افراد زخمی ہوئے۔

متعلقہ خبریں