پاکستانی پائلٹ رافیل طیارے اڑانے کے ماہر، رپورٹ پر بھارت میں صف ماتم

2019 ,اپریل 12



ئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) رافیل جنگی طیارہ سودے پر ملک میں مچے سیاسی گھمسان کے مابین فرانس نے ان میڈیا رپورٹوں کی تردید کی ہے کہ پاکستانی پائلٹوں کو قطر کی طرف سے رافیل جنگی طیارہ اڑانے کی تربیت دی گئی ہے۔امریکی پورٹل اے آئی این آن لائن نے گزشتہ فروری میں ایک رپورٹ میں کہا تھا کہ پاکستانی پائلٹوں کو نومبر 2017کو قطر کے تبادلہ پروگرام کے تحت رافیل طیارے اڑانے کی تربیت دی گئی تھی۔ہندستان نے اس سے ایک سال پہلے ہی فرانس کے ساتھ 36رافیل طیارے خریداری کے معاہدہ پر دستخط کئے تھے۔کانگریس نے کہاکہ رافیل معاملہ میں سپریم کورٹ نے مودی حکومت کو کرار دھچکہ دیاہے اور اس سودے سے منسلک جو دستاویز سامنے آرہے ہیں ان سے واضح ہے کہ وزیراعظم دفتر (پی ایم او) نے اس کو پورا کرنے میں جلدبازی دکھائی اور متوازی کردار ادا کیا ہے۔کانگریس ترجمان ابھیشیک منو سنگھوی نے جمعرات کو یہاں پارٹی ہیڈکوارٹر میں خصوصی پریس کانفرنس میں کہا کہ اس سلسلہ میں ایک دستاویز میں کہا گیا ہے کہ دفاعی سکریٹری نے وزیر دفاع کو لکھا کہ وزیراعظم دفتر رافیل طیارہ سودے میں متوازی گفتگو کررہا ہے اور اسے ایسا کرنے سے روکاجانا چاہئے۔انہوں نے کہا کہ یہ پہلی مثال ہے جس میں دفاعی سکریٹری اپنے محکمہ کے وزیر کو آگاہ کرتے ہوئے خط لکھ رہے ہیں او ر انہیں مشور ہ دے رہے ہیں کہ وہ وزیراعظم کے دفتر کو رافیل سودے میں اس طرح کی مداخلت کرنے سے روکیں۔

متعلقہ خبریں