نیب کے ساتھ کروڑوں روپے کی مفاہمت کرنے والی شخصیت کو اچانک ملک کا کونسا بڑا عہدہ دے دیا گیا ؟ جان کر عمران خان بھی دنگ رہ جائیں گے

2019 ,اپریل 5



پشاور(مانیٹرنگ ڈیسک) خیبر پختونخوا حکومت نے انوکھا فیصلہ کرتے ہوئے نیب کے ساتھ مفاہمت کرنے والے افسر کو ڈائریکٹر پی ڈی اے لگا دیا۔ گریڈ 19 کے افسر اکرام اللہ نے نیب سے دو کروڑ ساٹھ لاکھ روپے کی مفاہمت کی تھی۔خیبر پختونخوا حکومت کی بی آر ٹی منصوبے کے حوالے سے مشکلات ہیں کہ ختم ہونے کا نام ہی نہیں لے رہیں۔ بی آر ٹی میں ناقص کارکردگی پر سابق ڈی جی اسرار اللہ کو تو ہٹا دیا گیا لیکن ان کی جگہ جس افسر کو تعینات کیا گیا وہ نیب زدہ نکلے۔گریڈ انیس کے افسر اکرام اللہ کو صوبائی حکومت نے ڈی جی پی ڈی اے تعینات کرنے کا اعلامیہ جاری کر دیا ہے۔ ان کوکمشنر پشاور کی جانب سے پی ڈی اے کا اضافی چارج سنبھالنے سے انکار کے بعد تعینات کیا گیا۔نئے تعینات ہونے والے ڈی جی پی ڈی اے اکرام اللہ کے نیب زدہ ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔ 15۔2014ء میں سینئر افسر اکرام اللہ ڈائریکٹر پی ڈی اے کی حیثیت سے خدمات انجام دے رہے تھے۔ذرائع کے مطابق ان پر آمدن سے زائد اثاثے بنانے کے الزام میں نیب نے انکوائری شروع کی جس پرانہوں نے نیب سے رضاکارانہ مفاہمت کے قانون کے تحت مفاہمت کی درخواست کی اور دو کروڑ ساٹھ لاکھ روپے دے کر جان چھڑائی۔ دوسری جانب خبر یہ بھی ہے کہ اقوام متحدہ کی خیرسگالی کی سفیرہ 43 سالہ امریکی ماڈل انجلینا جولی نے کہا ہے کہ وہ اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کے عہدے کے حصول کی کوشش کررہی ہیں۔ انہیں امید ہے کہ وہ جلد اس اہم عہدے پر فائزہوجائیں گی۔خبر رساں اداروں کے مطابق انجلینا جولی نے جریدہ’پیپل’ کو دیے گئے ایک انٹرویو میں کہا کہ مجھے قطعا مایوس نہیں کہ میں اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کا عہدہ حاصل نہیں کر سکتی۔ میرا ویژن مجھے ایک دن اس عہدے تک پہنچا سکتا ہے۔

متعلقہ خبریں