دنیا میں دیمک کی جانب سے بنائی گئی وہ چیز جو خلا سے بھی نظر آتی ہے

2018 ,نومبر 23



برازیلیا (مانیٹرنگ رپورٹ) انسانوں کی بنائی ہوئی چند ہی چیزیں ہیں جو خلاءسے نظر آتی ہیں۔ ان میں ایک دیوارِ چین ہے۔ اب برازیل میں دیمک کی بنائی گئی ایک ایسی چیز بھی دریافت ہو گئی ہے جو خلاءسے نظر آتی ہے۔ ویب سائٹ telesurenglish.netکے مطابق یہ دیمک کے گھروندے ہیں جو حیران کن طور پر 4ہزار سال قدیم ہیں اور ماہرین نے حال ہی میں دریافت کیے ہیں۔ برازیل کی فیئرا ڈی سانتانا سٹیٹ یونیورسٹی کے پروفیسر فنچ کا کہنا ہے کہ ”دیمک کے یہ گھروندے بہت وسیع و عریض علاقے میں موجود ہیں جو چھوٹے چھوٹے اہرام مصر نظر آتے ہیں۔ آج تک انسان نے ایک چھوٹے سے کیڑے کی طرف سے بنائے گئے اتنے قدیم گھروندے نہیں دیکھے ہوں گے اور وہ بھی اتنے بڑے پیمانے پر۔ یہ گھروندے جتنے رقبے پر محیط ہیں وہ پورے برطانیہ کے رقبے کے برابر ہے۔“

    پروفیسر فنچ کا مزید کہنا تھا کہ” یہ گھروندوں کا ایک سمندر ہے جو خلاءسے بھی نظر آتا ہے اور سیٹلائٹ سے حاصل ہونے والی تصاویر کے ذریعے ہی انہیں دریافت کیا گیا ہے۔ یہ آج تک انسانی دستبرد میں نہیں آ سکے، یہی وجہ ہے کہ آج بھی محفوظ ہیں۔ یہ کسی بھی آباد شہر سے سینکڑوں کلومیٹر دور ایسے جنگلاتی علاقے میں ہیں اور انہیں جنگل کی خودروجھاڑیوں نے ڈھانپ رکھا ہے۔“

    متعلقہ خبریں