پاناما لیکس کے بعد آکسفیم لیکس کا انکشاف ہو گیا: قوم کا پیسہ لوٹنے والوں کی تجوریاں کہاں کہاں پڑی ہیں ؟ایک اور شرمناک فہرست منظر عام پر آگئی

تحریر: فضل حسین اعوان

| شائع دسمبر 13, 2016 | 07:52 صبح

لاہور (شیر سلطان ملک) بین الاقوامی نشریاتی ادارے  ڈی ڈبلیو کی ایک رپورٹ کے مطابق ایک برطانوی  ادارے آکسفیم نے دنیا میں ٹیکس چوروں کے بڑے ٹھکانوں کی ایک فہرست جاری کر دی ہے ۔

 آکسفیم نے انکشاف کیا ہے کہ ٹیکس چوروں کے پسندیدہ ملک ہالینڈ اور سوئٹزرلینڈ ہیں۔ اس رپورٹ کے مطابق دنیا بھر میں’ٹیکس چوروں کی جنت‘ یا ٹیکس ہیونز  کہلانے والے علاقے کارپوریٹ ٹیکس بچانے میں مدد کے معاملے میں قائدانہ کردار ادا کر رہے ہیں اور یوں م

ختلف ممالک کو اُن اربوں ڈالر سے محروم کر رہے ہیں، جنہیں غربت اور عدم مساوات کے خاتمے کے لیے استعمال کیا جا سکتا ہے۔

 آکسفیم کی اس فہرست میں  برمودا، کے مَین آئی لینڈز، سنگاپور، آئر لینڈ اور لکسمبرگ کو بھی ’بد ترین ٹیکس ہیونز‘ قرار دیا گیا ہے۔