جہلم: زیادتی کے بعد سکول کی طالبات کو بلیک میل، فحاشی کے اڈوں پر بھجوانے کا انکشاف

2017 ,اپریل 27



جہلم (مانیٹرنگ ڈیسک) سکول کی طالبات کو زیادتی کے بعد بلیک میل کرنے، فحاشی کے اڈوں پر بھیجنے کا انکشاف ہوا، گورنمنٹ ہائی سکول نمبر1 کی نویں کلاس کی طالبہ کی درخواست پر دو خواتین اور دو لڑکوں پر مقدمہ درج کر لیا، تھانہ سول لائن پولیس نے ایک لڑکا گرفتار کر لیا۔ سنسنی خیز انکشاف کی توقع ہے۔ بتایا جاتا ہے پیرا غیب کی رہائشی گورنمنٹ ہائی سکول نمبر 1 کی نویں کلاس کی طالبہ آنسہ حامد نے تھانہ سول لائن پولیس کو درخواست دی کہ میری کلاس فیلو علینہ نے دوستی کے باعث مجھے کچھ رقم، موبائل دیا تھا بعد میں واپس لینے کے لیے مجھے تنگ کرنا شروع کر دیا۔ نومبر 2016ءمیں دو لڑکے مجھ سے ملوائے جن کا نام عمیر اور قدیر ہے۔ 12دسمبر 2016ءکو علینہ مجھے اپنی امی سے ملوانے گھر لے کر گئی وہاں مجھ سے دو لڑکوں نے زیادتی کی۔ علینہ کی امی نے مجھے جان سے مارنے کی دھمکیاں بھی دیں۔ اب مجھ سے 15 لاکھ روپے مانگ رہے ہیں۔ طالبہ نے مزید بتایا کہ یہ گروہ دیگر بہت سی طالبات کے ساتھ زیادتی کر چکا ہے۔ بعد میں لڑکیوں کو بلیک میل کرکے فحاشی کے اڈوں پر بھی بھجوا دیتے ہیں۔ پولیس نے درخواست پر دو لڑکوں اور دو عورتوں کے خلاف مقدمہ درج کر کے ایک لڑکے کو گرفتار کر کے ریمانڈ حاصل کر لیا۔ پولیس ذرائع کے مطابق سنسنی خیز انکشافات کی توقع ہے۔ بہت سے سفید پوش بھی اس مکروہ دھندے میں ملوث ہیں۔

متعلقہ خبریں