سعودی عرب میں زیادتی کا نشانہ بننے والی بھارتی لڑکی کی جانب سے مدد کی اپیل ۔۔۔

2017 ,مارچ 29



حیدر آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )سعودی عرب میں کفیل کے بیٹے کے ہاتھوں جنسی زیادتی کا نشا نہ بننے والی بھارتی لڑکی نے مدد کی اپیل کر دی ۔”دی ٹائمز آف انڈیا “ کے مطابق ملازمت کیلئے سعودی عرب میں کفیل کے بیٹے کی جانب سے زیادتی کا نشانہ بننے والی بھارتی لڑکی بھاگ کر جان بچانے میں کامیاب ہو گئی جس نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ سعودی شہر ریاض میں اس کے کفیل کا 25سالہ بیٹا اپنی والدہ کی موجودگی میں مجھے زبردستی اپنے کمرے میں لے گیا اور جنسی زیادتی کا نشانہ بنا تا رہا ۔بھارتی لڑکی کا کہنا ہے کہ حیدر آباد سے اسکا ایجنٹ بیوٹی پارلر کی ملازمت کا جھانسہ دیکرسعودی عرب لیکر گیا مگر وہاں عربی کے گھر نوکری پر رکھوا دیا جہاں مجھے گزشتہ تین سالوں سے قید میں رکھا گیا اور ہوس کا نشانہ بنایا جاتا رہا ۔ریاض میں سماجی کارکن مہد عامر نے ٹائمز آف انڈیا کو بتایا کہ لڑکی کو ابھی بھی خدشہ ہے کہ کفیل اسے پکڑ لے گا۔ایم بی ٹی کے رہنما امجد اللہ خان کا کہنا ہے کہ لڑکی کو حیدر آباد کے ایجنٹ نے ملازمت کا جھانسہ دیا تاہم اس معاملے کے منظر عام پر آنے کے بعد وزیر خارجہ سشما سراج کو خط لکھ دیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ سعودی کفیل ریاض ، ممبئی اور حیدر آباد میں اپنے ایجنٹوں کے ساتھ ملکر انسانی سمگلنگ کا بڑا نیٹ ورک چلا رہی ہیں ۔ جس کے بارے میں جلد از جلد معلومات اکٹھی کی جائیں۔۔۔ اور ان درندہ صفت انسانوں کو حراست میں لیا جائے۔۔۔۔

متعلقہ خبریں