بہت بڑے پادری نے ایسا شرمناک جرم کردیاکہ منہ دکھانے کے قابل نہ رہا

2017 ,جون 29



سڈنی (مانیٹرنگ ڈیسک) گزشتہ کئی سال سے عیسائی پادریوں کی بچوں کے ساتھ جنسی زیادتی کے سکینڈل سامنے آ رہے تھے لیکن اب تو حد ہی ہو گئی، پوپ فرانسس کے میر منشی اور کیتھولک چرچ کے تیسرے سینئر ترین کارڈینل جان پیل پر بھی بچوں کیساتھ جنسی زیادتی کے الزامات سامنے آگئے ہیں۔ 
 آسٹریلوی کارڈینل کو الزامات کا جواب دینے کے لئے تین ہفتوں کے دوران میلبرن کی عدالت کے سامنے پیش ہونے کا حکم دیاگیا ہے۔ آسٹریلیااور ویٹی کن کے درمیان مجرموں کے تبادلے کا معاہدہ نہیں ہے تاہم 76سالہ کارڈینل نے پہلے ہی عدالت میں الزامات کا سامنا کرنے کے عزم کا اظہار کیا ہے۔پادریوں کے جنسی جرائم کی تاریخ میں کارڈینل پیل اس الزام کا سامنا کرنیوالا سینئر ترین پادری ہے۔ کیتھولیک عیسائیت کے روحانی پیشوا پوپ فرانسس کی جانب سے اس معاملے پر تاحال کوئی تبصرہ سامنے نہیں آیا۔وکٹوریہ پولیس نے کارڈینل پیل کیخلاف الزامات کی فہرست ان کی قانونی ٹیم اور میلبرن کی عدالت کے سامنے پیش کردی ہے۔ پولیس نے اپنے ایک بیان میں کہاکہ ”کارڈینل پیل کوماضی میں کیے گئے جنسی جرائم کے الزامات کا سامنا ہے۔ان کیخلاف متعدد شکایات موصول ہونے کے بعد تحقیقات کا آغاز کیاگیاتھا۔ تفتیش کے دوران ان کے ساتھ قانون کے مطابق سلوک کیاگیا۔ اس ضمن میں آفس آف پبلک پراسیکیوشن سے بھی رہنمائی لی گئی۔“وکٹوریہ پولیس کی جانب سے کارڈینل پیل پر لگائے گئے الزامات کی تفصیلات بیان نہیں کی گئیں تاہم یہ واضح ہے کہ ان پر بھی متعدد دیگر پادریوں کی طرح بچوں سے جنسی زیادتی کے الزامات عائد کیے گئے ہیں۔

متعلقہ خبریں